ایران ایک اچھے معاہدے تک پہنچنے کیلئے پرعزم ہے: امیرعبداللہیان

تہران، ارنا – ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران ایک اچھے معاہدے تک پہنچنے کے لئے پر عزم ہے۔

یہ بات "حسین امیرعبداللہیان" نے ہفتہ کے روز اپنے بھارتی ہم منصب سوبرامانیم جے شانکارا کے ساتھ ایک ٹیلی فونگ رابطے کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے اس گفتگو کے دوران اہم ترین دوطرفہ، علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر تبادلہ خیال کیا۔
ایرانی وزیر خارجہ نے کوویڈ19 بیماری کے خلاف مہم کی تازہ ترین صورتحال پر بھارتی وزیر خارجہ کے سوال کے جواب میں کہا کہ ملک گیر ویکسینیشن کے تسلی بخش عمل کافی مثبت ہے، ہم وائرس کے پھیلاؤ کو کنٹرول کرنے میں کامیاب رہے ہیں۔ اور اب تک ہمارے 89 فیصد لوگوں کو دو بار ویکسین لگائی جا چکی ہے، ان میں سے ایک بڑا حصہ تیسری خوراک حاصل کر رہا ہے۔
امیرعبداللہیان نے افغانستان کے موجودہ حالات کے بارے میں ایک جامع حکومت کے قیام کی ضرورت پر زور دیا اور افغانستان کے لیے بھارت کی انسانی امداد کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے بھی گندم، ادویات اور کورونا وائرس کی ویکسین کی بہت سی کھیپ افغانستان کو بھیجی ہے۔
انہوں نے پابندیوں کے خاتمے کے لیے ویانا مذاکرات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ مذاکرات درست سمت میں آگے بڑھ رہے ہیں، ہمارے اچھے ارادے ہیں اور ایک اچھے معاہدے کے حصول کے لیے مطلوبہ ارادہ ہے اور اگر مغربی فریق بھی اسی طرح کے اچھے ہیں۔ قوت ارادی اور مضبوط عزم، تب ہی ہم ایک اچھے معاہدے تک پہنچ سکتے ہیں۔
بھارتی وزیر خارجہ نے کہا کہ بدقسمتی سے کوویڈ-19 کے بھارتی مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے تاہم ویکسینیشن کے عمل کی رفتار تسلی بخش ہے اور اس طرح وبائی مرض پر کچھ ہی دیر میں قابو پایا جا سکتا ہے۔
انہوں نے قریب مستقبل میں ایرانی وزیر خارجہ کے دورے بھارت پر اپنی خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ دوطرفہ تعاون کو فروغ دینے کا ایک بہت اچھا موقع فراہم کرے گا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

متعلقہ خبریں

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha