کینیڈا کی حکومت کے انسانی حقوق کی قرارداد بے بنیاد دعووں کی تکرار ہے: ایران

تہران، ارنا – ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ کینیڈا کی حکومت کے ذریعہ اقوام متحدہ میں انسانی حقوق کی قرارداد بے بنیاد دعووں کی تکرار اور غلط اطلاعات کی بنیاد پر ہے جس کی کوئی قانونی اور ناقابل قبول صداقت نہیں ہے۔

سعید خطیب زادہ نے کہا کہ افسوس کی بات ہے کہ کچھ ممالک بشمول کینیڈا ، اپنے سیاسی عزائم کو آگے بڑھانے کے لئے انسانی حقوق اور بین الاقوامی طریقہ کار کو بطور اوزار استعمال کرتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ اس طرح کے غیر تعمیری اقدامات نہ صرف عالمی سطح پر انسانی حقوق کی حیثیت اور ان کے احترام کو فروغ دینے میں معاون نہیں ہیں بلکہ مستقل ممالک کے خلاف محض منفی تصورات اور سیاسی لیبلنگ کو بھی فروغ دیتے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ہم کینیڈا کی حکومت اور اس قرار داد کے دوسرے بانیوں کے اقدامات کی مذمت کرتے ہیں جو مختصر نظر والے سیاسی مقاصد کو آگے بڑھانے کے لئے انسانی حقوق کے ماورائے تصورات اور اقدار کے غلط استعمال کی ایک واضح مثال ہے اور اس کا کوئی قانونی اثر نہیں ہے۔
ایرانی ترجمان نے کہا کہ 193 ممالک میں سے 114 ممالک نے قرارداد کے مسودے کو مسترد یا پرہیز کرتے ہوئے اور کینیڈا کی حکومت کو مشورہ دیا کہ ایرانی عوام کے انسانی حقوق پر منافقانہ ہمدردی کرنے کے بجائے ایرانی عوام کے خلاف امریکی حکومت کی معاشی دہشت گردی کے ساتھ اتحاد کرنے اور ایرانی عوام کے بدعنوان اور چوروں کی میزبانی کرنے سے باز رہیں جو جائیداد کی منتقلی اور سرمایہ کاری کے لئے کینیڈا کو محفوظ پناہ گاہ بنا چکے ہیں۔
انہوں نے مزید کہا کہ کینیڈا کی طرف سے تجویز کردہ قرارداد جو کئی سالوں سے اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف اس ملک کی دشمنانہ پالیسیوں کے مطابق ہے ، آج صیہونی حکومت ، امریکہ ، سعودی عرب ، بحرین ، متحدہ عرب امارات ، البانیہ ، کینیڈا سمیت اقوام متحدہ کے نصف سے بھی کم ممالک نے ووٹ دیا۔ 114 ممالک نے اس قرار داد کے خلاف ووٹ دیا یا حق رائے دہی کے اجلاس میں حصہ نہیں لیا۔
انہوں نے کینیڈا کے انسانی حقوق کے میدان میں امریکہ ، ناجائز صہیونی ریاست ، بحرین ، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب جیسے متعدد بدنام زمانہ حکومتوں کو اکٹھا کرنے کے اقدام کو ایرانی عوام کو انسانی حقوق کی تعلیم دینا شرم کی بات سمجھا اور کینیڈا کے عہدیداروں سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے ملک کے اندر اور باہر انسانی حقوق کی کارکردگی میں اصلاحات پر کام کریں اور دیسی کینیڈینوں کے خلاف نسل کشی کی حکومت کی منظم پالیسی کو روکنے اور یمنی اور فلسطینی عوام کے خلاف سعودی اور صہیونیوں کے ذریعہ ہونے والے غیر انسانی جرائم میں ملوث ہونے کا ردعمل ظاہر کریں۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

متعلقہ خبریں

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 9 =