نائب ایرانی وزیر خارجہ کا اپنے روسی ہم منصب سے ویانا مذاکرات کی تبدیلیوں پر تبادلہ خیال

ماسکو، ارنا- روس کے دورے پر آئے ہوئے ویانا مذاکرات میں حصہ لینے والی ایرانی ٹیم کے سربراہ اور نائب ایرانی وزیر خارجہ برائے سیاسی امور نے اپنے روسی ہم منصب سے ایک ملاقات میں ویانا مذاکرات کی تازہ ترین تبدیلیوں کا جائزہ لیا۔

رپورٹ کے مطابق، "باقری کنی" اور "ریابکوف" نے اس املاقات می باہمی دلچسبی امور سمیت ایران اور 1+4 گروہ کے درمیان ویانا مذاکرات کی تازہ ترین تبددیلیوں پر تبادلہ خیال کیا۔

اس موقع پر دونوں فریقین نے بین الاقوامی مسائل اور ایران اور 1+4 گروہ کے درمیان مستقبل کے مذاکرات کے سلسلے میں باہمی مشاورت کا سلسلہ جاری رکھنے پر زور دیا۔

واضح رہے کہ اعلی ایرانی مذاکرات کار کا دورہ ما سکو ایران اور گروہ 1+4 کے درمیان ویانا مذاکرات کے اگلے دور سے پہلے کیا گیا ہے۔

ویانا میں ایران اور گروہ 1+4 کے درمیان مذاکرات کے نئے دور کا آغاز 29 نومبر سے آسٹرین دارالحومت ویانا میں انعقاد کیا گیا اور 3 دسمبر تک اختتام پذیر ہوا۔ اس مذاکرات کا رواں ہفتے کے آخری دنوں میں از سر نو آغاز کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ جمعہ کے دن کو ایران اور گروہ 1+4 نمائندوں کی شرکت سے جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے اجلاس کا انعقاد کیا گیا جس میں فریقین نے ایران کیجانب سے پیش  کردہ دو دستاویزات کے پیش نظر مذاکرات کے پیشرفت اور نتائج کا جائزہ لیا۔

ایران نے اپنے تجویز کردہ متن کو ظالمانہ پابندیوں کی منسوخی اور جوہری مسائل کے فریم ورک میں دیگر فریقین کو پیش کیا۔ اور دیگر فریقین نے اپنے حکام سے مشورہ لینے کیلئے اپنی اپنی دارالحکومتیں واپس چلنے کا مطالبہ کیا لہذا مذاکرات ایک ہفتے کیلئے مطعل کر دیا گیا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha