ایران کا مختلف ممالک کیساتھ سیاحتی شعبے میں تجربات اور تعاون کا تبادلہ

تہران، ارنا – نائب ایرانی وزیر ثقافت، سیاحت اور دستکاری نے مختلف ممالک کے ساتھ سیاحت کے شعبے میں تجربات کے تبادلہ اور باہمی تعاون پر زور دیا۔

یہ بات "علی اصغر شالبافان" نے ہفتہ کے روز میڈرڈ میں ورلڈ ٹورازم آرگنائزیشن کی جنرل اسمبلی (UNWTO) کے موقع پر مختلف ممالک بالخصوص پڑوسی اور علاقے کے حکام اور وزرائے سیاحت کے ساتھ ایک ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے اس تین روزہ نشست میں پاکستان، بھارت، عمان، جارجیا، ماریشس، کویت، ازبکستان، افغانستان، آذربائیجان، جرمنی، گوئٹے مالا، انڈونیشیا، اٹلی، ترکی، ملائیشیا اور روس کے سیاحتی حکام کے ساتھ دو طرفہ تعلقات کی توسیع اور تجربات کے تبادلے کی ضرورت پر زور دیا۔
شالبافیان نے تہران میں سیاحت اور متعلقہ صنعتوں کی 15ویں بین الاقوامی نمائش میں حکام کو مدعو کرتے ہوئے مشترکہ تجربات سے استعمال، دونوں ممالک کے کاروبار کی حمایت اور دوطرفہ تعاون کی بنیاد بنانے سمیت دیگر امور پر تاکید کی۔
انہوں نے مذکورہ ملاقاتوں میں کورونا وبا کے بحران کے تناظر میں ممالک کے انتظامی عمل کے اثرات اور سیاحت کی صنعت کی بحالی میں ویکسینیشن کے کردار کا بھی ذکر کیا۔
تفصیلات کے مطابق، 24ویں ورلڈ ٹورازم آرگنائزیشن کی جنرل اسمبلی (UNWTO) کا 30 نومبر سے 3 دسمبر تک میڈریڈ میں انعقاد کیا گیا۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

متعلقہ خبریں

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha