ایرانی وزیر ثقافت کا تہران- اسلام آباد کے ثقافتی تعلقات کے فروغ پر زور

تہران، ارنا- ایرانی وزیر ثقافت نے ایران اور ہمسایہ ممالک کے درمیان ثقافتی تعلقات کے فروغ کی 13 ویں حکومت کی پالیسی پر تبصرہ کرتے ہوئے تہران- اسلام آباد کے درمیان تعلقات کی تقویت اور توسیع پر زور دیا۔

رپورٹ کے مطابق، "محمد مہدی اسماعیلی" نے آج بروز بدھ کو تہران میں تعینات پاکستانی سفیر "رحیم حیات قریشی" سے ایک ملاقات میں ایران اور پاکستان  کے درمیان دیرینہ تاریخی، ثقافتی اور تہذیبی تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ملکوں کے اس شعبوں میں بہت سے مشترکات ہیں اور بہت سارے ایرانی ممتاز شخصیات نے پاکستان کے بعض علاقوں میں ثقافتی سرگرمیاں کی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ  یرانیوں کا پاکستانی عوام کیساتھ ہمیشہ بھائی چارے اور دوستی کا جذبہ رہا ہے اور گزشتہ ایک صدی کے دوران ایران میں اقبال لاہوری سمیت پاکستانی معزز شخصیات پر بڑی توجہ دی جاتی ہے اور اس عظیم شاعر کے اشعار ہمارے سکولوں میں پڑھائی جاتی ہیں۔

ایرانی وزیر ثقافت نے کہا کہ ایرانی عوام، اہم پاکستانی شخصیات سے واقف ہیں اور پاکستانی مفکرین اور اشرافیہ پر توجہ دیتے ہیں۔

اسماعیلی نے پاکستان کی ثقافت اور فن سے واقفیت کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران میں انسانیت کے مختلف شعبوں میں بہت سی پاکستانی شخصیات پرتوجہ دی گئی ہے۔

ایرانی وزیر ثقافت کا تہران- اسلام آباد کے ثقافتی تعلقات کے فروغ پر زور

انہوں نے مزید کہا کہ آج خطے کے تمام مسائل کے باوجود پاکستان، سیاسی اور معاشی مسائل کے علاوہ اپنے سائنسی مسائل کو بھی اچھی طرح آگے بڑھانے میں کامیاب رہا ہے۔

ایرانی وزیر ثقافت نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان موجود تاریخی اور تہذیبی پس منظر اور ثقافتی دلچسبی کے پیش نظر، فن کے مختلف شعبوں جیسے سینما، موسیقی وغیرہ میں ثقافتی تعلقات کو وسعت دینے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی 13ویں حکومت کی یقینی پالیسیوں میں سے ایک یہ ہے کہ ایران اور پڑوسی ممالک کے درمیان ثقافتی سرگرمیوں کی توسیع پر خصوصی توجہ دی جائے۔

اسماعیلی نے ثقافتی اور فنی پروگراموں کی تعاون کی یادداشت پر دستخط کے مقصد سے دونوں ممالک کے ثقافتی وزراء کی مشترکہ ملاقات کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ جتنا ہم دونوں ممالک کے عوام کو ایک دوسرے کے قریب لانے کی زیادہ کوشش کریں گے اتنا ہی ایران اور پاکستان کے درمیان مناسب اور اچھی ثقافتی سرگرمیوں کو فروغ دینے کا باعث بنے گا۔

ایرانی وزیر ثقافت کا تہران- اسلام آباد کے ثقافتی تعلقات کے فروغ پر زور

انہوں نے کہا کہ ثقافتی ہفتوں کا انعقاد اور دونوں ممالک کے بڑے شہروں کے درمیان نئے سسٹر سیٹی معاہدے جیسے پرگرواموں کو منعقد اور ان کو وسعت دے سکتے ہیں۔

در این اثنا پاکستانی سفیر نے کہا کہ ایران اور پاکستان میں بہت سی ثقافتی اور تہذیبی مماثلتیں ہیں۔ آٹھ سو سال سے جنوبی ایشیا میں ہماری سرکاری زبان فارسی رہی ہے اور دونوں قوموں کی طرز تعمیر اور زبان ایک دوسرے کے قریب ہے۔

رحیم حیات قریشی نے دونوں ممالک کے درمیان سنیما، ثقافتی اور فنی تعاون پر زور دیا۔انہوں نے کہا کہ مشترکہ فلمی منصوبوں میں ایران اور پاکستان، دونوں ممالک کے بہادر کرداروں پر مبنی فلمیں اور سیریز بنا سکتے ہیں اور انہیں اپنے ناظرین کے سامنے پیش کر سکتے ہیں۔

پاکستانی سفیر نے پیغمبر اسلام (ص) کی اس حدیث "اگر علم ثریا میں ہو تو ایران کے لوگ اسے حاصل کریں گے"، کا حوالہ دیتے ہوئے کہ ہمیں اس بات پر بہت فخر ہے کہ ثقافت اور اسلامی رہنمائی کی وزارت میں ایک ایسے وزیر کا تقرر کیا گیا ہے جو ثقافت کی گہری سمجھ رکھتے ہیں اور ہم دونوں ممالک کے درمیان ثقافتی اور فنکارانہ تعلقات کو بڑھانے میں دلچسبی رکھتے ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha