27 اکتوبر، 2021 7:50 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 84520514
0 Persons
باقری اور مورا کا نومبر میں جوہری مذاکرات کے آغاز سے اتفاق

تہران، ارنا- نائب ایرانی وزیر خارجہ برائے سیاسی امور "علی باقری کنی" اور یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے نائب سربراہ "انریکہ مورا" نے جوہری مذاکرات کی راہ میں حائل رکاوٹوں کا جائزہ لیتے ہوئے نومبر میں ان مذاکرات کے آغاز سے اتفاق کیا۔

رپورٹ کے مطابق، بلجیم کے دورے پر آئے ہوئے نائب ایرانی وزیر خارجہ برائے سیاسی امور نے یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے نائب سربراہ اور ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے کوارڈینیٹر سے ایک ملاقات میں ایران کیخلاف عائد پابندیوں کو موثر طریقے سے اٹھانے اور دیگر فریقین کیجانب سے اپنے وعدوں پر پورا اترنے سےمتعلق گفتگو کی۔

اس موقع پر علی باقری کنی نے جوہری معاہدے سے متعلق کیے گئے وعدوں سے متعلق وعدہ خلافیوں اور پھر اس معاہدے سے امریکی علیحدگی و نیز یورپی فریقین کیجانب سے اپنے کیے گئے وعدوں پر عمل نہ کرنے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اب ایران کیلئے پابندیوں کی مکمل اور موثر طریقے سے منسوخی، ایران اور دنیا سے تجارتی تعلقات کو معمول پر لانا اور اس معاہدے سے ایرانی مفادات حاصل ہونا، اہم ہے۔

انہوں نے دیگر فریقین کیجانب سے وعدہ خلافی اور غیر قانونی رویے اپنانے کی عدم تکرار کی ضمنت دینے کو ایران کیا ناگزیر مطالبہ قرار دے دیا۔

اس ملاقات میں دونوں فریقین نے جوہری مذاکرات کی راہ میں حائل رکاوٹوں کا جائزہ لیتے ہوئے نومبر میں ان مذاکرات کے آغاز سے اتفاق کیا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha