ایرانی پیٹروکیمیکل مصنوعات کی سالانہ پیداوار 167 ملین ٹن تک پہنچ جائے گی

کیش، ارنا- نائب ایرانی وزیر تیل اور نیشنل پیٹروکیمیکل کمپنی کے سربراہ نے کہا ہے کہ ایک 6 سالہ منصوبے کے فریم ورک کے اندر ملک پیٹروکیمیکل مصنوعات کی سالانہ پیداوار 83 ملین ٹن سے بڑھ کر 167 ملین ٹن تک پہنچ جائے گی۔

ان خیالات کا اظہار "بہزاد محمدی" نے کل بروز پیر کو کیش جزیرے میں تیل، گیس، پیٹرو کیمیکل اور قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں سرمایہ کاری کے مواقع اور ترقی کو متعارف کرانے والی آیفیکس 2021 نمائش اور کانفرنس کی افتتاحی تقریب کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ منصوبہ 1406 کے شمسی سال تک مرتب کیا گیا ہے اور نافذ کیے گئے منصوبوں کے پیش نظر اس کی کامیابی حتمی ہے۔

محمدی نے مزید کہا کہ اگر اس پروگرام کو عملی جامہ پہنایا جائے تو ملک کے پیٹرو کیمیکل سیکٹر میں سرمایہ کاری کی رقم اس پروگرام کے اختتام پر موجودہ 79 ارب ڈالر سے بڑھ کر 140 ارب ڈالر تک بڑھ جائے گی۔

انہوں نے کہا کہ ملک کی سالانہ آمدنی بھی 14 ارب ڈالر سے بڑھ کر 53 ارب ڈالر تک پہنچ جاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں، ملک کی پیٹرو کیمیکل انڈسٹری کی 6 ترقیاتی زنجیروں کی نشاندہی کی گئی ہے، جن میں میتھانول، پروپیلین، بینزین، بیوٹیلین، یوریا اور ایتھیلین شامل ہیں اور پہلے مرحلے میں ان کے لیے سرمایہ کاری کے 33 مواقع تیار کیے گئے ہیں۔

نائب ایرانی وزیر تیل اور نیشنل پیٹروکیمیکل کمپنی کے سربراہ نے کہا کہ ان منصوبوں کے لیے تین ارب 500 ملین ڈالر کی سرمایہ کاری کی جائے گی جس سے بریڈی انٹرسٹ کے بعد ملکی صلاحیت میں 3.5 ملین ٹن کا اضافہ ہو گا۔

واضح رہے کہ کیش جزیرے میں تیل، گیس، پیٹرو کیمیکل اور قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں سرمایہ کاری کے مواقع اور ترقی کو متعارف کرانے والی آیفیکس 2021 نمائش اور کانفرنس کا پیر کے روز میں افتتاح کیا گیا۔

اس نمائش میں مختلف شعبوں کے 80 بوتھس موجود ہیں؛ اور 125 سرمایہ کار کمپنیاں؛ بشمول توانائی، تیل، گیس اور پیٹرو کیمیکلز آزاد تجارت اور خصوصی اقتصادی زونز میں قابل تجدید توانائی کے شعبوں میں ترقی کیساتھ 45 فعال علم پر مبنی کمپنیاں شامل ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha