ایران اور روس کے فوجی تعاون میں اضافہ ہوگا: میجر جنرل باقری

ماسکو، ارنا- روس کے دورے پر آئے ہوئے ایرانی مسلح افواج کے سربراہ میجر جنرل باقری نے کہا ہے کہ تیرہویں حکومت کی مشرق سے تعلقات کے فروغ کی پالیسی کے سلسلے میں ایران- روس دفاعی تعاون میں اضافہ ہوگا۔

ان خیالات کا اظہار میجر جنرل "محمد باقری" نے ماسکو کی آمد پر ارنا نمائندے کے سوال کے جواب میں کیا جنہوں نے ایرانی تیرہویں حکومت کی مشرق سے تعلقات کے فروغ کی پالیسی سے متعلق پوچھا تھا۔

ایرانی مسلح افواج کے سربراہ نے کہا کہ ایرانی صدر سید ابراہیم رئیسی کا انتظامیہ، مشرق اور ایشیائی ممالک سے تعلقات پر خاص نظر رکھتا ہے جس کا آغاز شنگھائی تعاون تنظیم میں ایران کی مستقل شمولیت سے ہوا۔

میجر جنرل باقری نے کہا کہ اس حوالے سے یقینی طور پر ایران اور روس کی مسلح افواج کے درمیان تعاون کا فروغ ہوگا۔

واضح رہے کہ ایرانی مسلح افواج کے سربراہ میجر جنرل محمد باقری، روسی وزیر دفاع "سرگئی شایگو" کی باضابطہ دعوت سے ایک اعلی سطحی وفد کی قیادت میں 17 اکتوبر کو ماسکو کے دورے پر پہنچ گئے جہاں ماسکو میں تعینات ایرانی سفیر "کاظم جلالی" اور سفارتخانے کے عملے سمیت روسی محکمہ دفاع کے عہدیداروں نے ان کا استقبال کیا۔

دفاعی اور فوجی تعلقات کا فروغ، دہشتگردی کیخلاف جن، بین الاقوامی اور علاقائی تبدیلیاں، ان موضوعات میں سے چند ہیں جن پر دونوں فریقین تبادلہ خیال کریں گے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha