22 ستمبر، 2021 11:22 AM
Journalist ID: 2393
News Code: 84479950
0 Persons
ایران نے ویکسین عطیہ کرنے پر آسٹریا کا شکریہ ادا کیا

نیویارک، ارنا – ایرانی وزیر خارجہ نے ایران کو ویکسین عطیہ کرنے پر آسٹریا کا شکریہ ادا کیا۔

یہ بات حسین امیر عبداللہیان نے منگل کے روز اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 76 ویں اجلاس کے موقع پر آسٹرین وزیر خارجہ الکساندر شالنبرگ کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی۔

انہوں نے اس ملاقات کے دوران ایران کو ویکسین عطیہ کرنے پر آسٹریا کا شکریہ ادا کرتے ہوئے دوطرفہ تعلقات کی تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لے آسٹریا کے ساتھ مالی اور بینکنگ تعلقات خاص طور پر اقتصادی تعلقات کو مزید وسعت دینے کیلیے ایران کی دلچسپی پر زور دیا۔

انہوں نے کہا کہ نئی ایرانی حکومت آسٹریا کے ساتھ تعلقات کو بہترین سطح پر لانے کے لیے تیار ہے۔

امیر عبداللہیان نے یورپ کے ساتھ متوازن تعلقات کی وضاحت کے لیے تہران کے ارادے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ایران کے ساتھ امریکہ کے غیر تعمیری رویے  کو ایران اور یورپ کےدرمیان تعلقات کو متاثر نہیں کرنا چاہیے۔

انہوں نے افغانستان کی تازہ ترین صورتحال پر تبادلہ خیال کرتے ہوئے افغان عوام کی مرضی کے مطابق ایک جامع حکومت کی تشکیل پر زور دیا۔

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ ہم افغانستان کی مدد کے لیے کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے اور تمام دباؤ کے باوجود اس امداد کو جاری رکھیں گے.

ایران نے چار دہائیوں سے کروڑوں افغان بھائیوں اور بہنوں کی میزبانی کی ہے، لیکن اس صورتحال کے تسلسل کو  ذمہ دار بین الاقوامی اداروں کی مدد  درکار ہے۔ عالمی برادری کو اس حوالے سے اپنی ذمہ داریوں کو پورا کرنا چاہیے۔

آسٹرین وزیر خارجہ نے کہا کہ ویانا نے ہمیشہ ایران کے ساتھ تعلقات بڑھانے کی کوشش کی ہے اور تعلقات کی بہتری کے لیے کوئی حد مقرر نہیں کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ آسٹریا ماضی کی طرح ویانا میں جوہری مذاکرات کی میزبانی میں دلچسپی رکھتا ہے ۔ جوہری معاہدے کو زندہ کرنے کا ایک اچھا موقع ہے اور ہم سب کو محتاط رہنا چاہیے کہ اس کھڑکی کو بند نہ کریں۔

انہون نے مزید بتایا کہ اس سلسلے میں ایران اور بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کے درمیان اچھا اور قریبی تعاون مذاکرات میں خلل ڈالنے کے لیے بعض تخریب کاروں کے اقدامات کو روکتا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

https://twitter.com/IRNAURDU1

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha