دفاعی صنعت ملکوں کی صنعت اور ٹیکنالوجی کا محرک ہے: جنرل سلامی

تہران، ارنا -  پاسداران اسلامی انقلاب کے سربراہ نے کہا ہے کہ دفاعی صنعت ممالک بشمول ایران کی صنعت اور ٹیکنالوجی کا محرک ہے

یہ بات جنرل حسین سلامی نے سپاہ پاسداران انقلاب کے زیر اہتمام ایک میلے کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئےکہی۔

انہوں نے مزید بتایا کہ دفاعی صنعت کی ترقی ایران سمیت ممالک  کی صنعت اور ٹیکنالوجی کا محرک ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایران نے بار بار ثابت کیا ہے کہ وہ دشمنوں کی مشکلات اور ان کے مذموم اور خطرناک عزائم اور رکاوٹوں پر قابو پالیا ہے اور اپنی ضروریات کو خود پورا کرسکتا ہے اور اپنی ضروریات کی فراہمی کیلیے دشمن کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔

جنرل سلامی نے بتایا کہ دشمن دباؤ ڈالنے کے ساتھ ضرورت اور دباؤ کی لکیر کو ملانے کی کرشش کر رہاہے اور فی الحال جدوجہد کر رہے ہیں تاکہ ہم قومی سلامتی کو یقینی بنانے اور دشمن کے خطرے سے بچنے سے اس میں پناہ لیں۔

انہوں نے کہا کہ دشمن نے ہم پر معاشی پابندیاں عائد کی ہیں تاکہ ہم معاشی یلغار کے خطرے سے بچنے کیلیے اس میں پناہ لیں۔ دشمن نے ہمیں سائنسی اور تکنیکی محاصرے میں ڈال دیا ہے کہ پسماندگی کے خوف سے اس سے پناہ لیں۔

انہوں نے بتایا کہ ہم نے سیکھا کہ تمام مسائل ہمارے معاشرے ،ذہن ، عقائد کے اندر حل کیا جا سکتا ہے۔ یہ ثقافت ، ایمان ، سچائی اور ہمارے انقلاب کا ترقی پسند راستہ ہے ، جسے ہم آج دیکھ رہے ہیں ، کامیابیاں روز بروز نئی ہوتی جارہی ہیں۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

https://twitter.com/IRNAURDU1

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha