دنیا نے انسداد منشیات میں ایران کے قیمتی تجارت کا بدستور خیر مقدم کیا ہے

تہران، ارنا- ایران کی انسداد منشیات کمیٹی کے سیکرٹری جنرل نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کو دوسرے ممالک کے مقابلے میں انسداد منشیات کے میدان میں قیمتی تجربات حاصل ہے اسی لئے دیگر ممالک اس حوالے سے ایران کے تربیتی کورسز کا خیر مقدم کرتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار "امیر عباس لطفی" نے آج بروز بدھ کو یونیورسٹی آف تہران کونسلنگ سینٹر میں ایشیا انٹریکشن اینڈ کنفیڈنس بلڈنگ کانفرنس کے فریم ورک کے اندر "منشیات کی لت سے ہونے والے نقصانات کا علاج اور کمی" سے متعلق منعقدہ ورچوئل ٹریننگ نشست میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس نشست کے انعقاد کا مقصد سی آئی سی اے ممالک کے درمیان، اس لعنت کی علاج اور اس کے نقصانات کو کم کرنے کی حکمت عملیوں کا جائزہ لینا ہے۔

 لطفی نے نوٹ کیا کہ ایشیا کنفیڈنس بلڈنگ کانفرنس ماضی میں منعقد کی گئی تھی تا کہ ایشیائی خطے میں سیکورٹی کے مسائل پر اعتماد پیدا کیا جا سکے؛ کچھ کانفرنسیں منعقد ہوکر ایک مخصوص تاریخ کو ختم ہوتی ہیں، لیکن سیکورٹی کے مسائل پر تعاون کانفرنس کے مستقل انعقاد کا باعث بنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ 29 سے زائد ممالک اس کانفرنس کے رکن ہیں اور اسلامی جمہوریہ ایران اس کانفرنس میں منشیات کیخلاف جنگ کی ذمہ دار ہے، جس نے شروع سے سی آئی سی اے کے رکن ممالک کے لیے انسداد منشیات کے مختلف شعبوں میں تربیتی کورسز منعقد کیے ہیں۔

لطفی نے کہا کہ مادوں کی وجہ سے طلب اور اثرات کو کم کرنے کے سلسلے میں یہ دوسری میٹنگ ہے اور پولیس تعاون اور انسداد فراہمی میں بھی ، ہمارے ملک کی طرف سے خصوصی تربیتی کورس منعقد کیے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کو دوسرے ممالک کے مقابلے میں انسداد منشیات کے میدان میں قیمتی تجربات حاصل ہے   اسی لئے دیگر ممالک اس حوالے سے ایران کے تربیتی کورسز کا خیر مقدم کرتے ہیں۔

ایران کی انسداد منشیات کمیٹی کے سیکرٹری جنرل نے اس امید کا اظہار کرلیا کہ اس نشست منشیات کی لت سے نقصانات کی کمی و نیز اس کے علاج کیلئے موثر او تعمیر ثابت ہوگی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha