لاطینی امریکہ سے تعلقات کا فروغ ایران کی خارجہ پالیسی کی ترجحیات میں ہے: ایرانی صدر

تہران، ارنا- ایرانی صدر نے "ہماری امریکی قوموں کی بولیویرین یونین" کے سیکرٹری جنرل سے ایک ملاقات کے دوران، اسلامی جمہوریہ ایران اور البا یونین کے ممبر ممالک کے درمیان مشترکہ اقدار پر تبصرہ کرتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ان ملک البا یونین سے سیاسی اور اقتصادی تعلقات کے فروغ میں دلچسبی رکھتا ہے۔

علامہ رئیسی نے باہمی تعاون کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ مناسب منصوبہ بندی سے مختلف شعبوں میں دو طرفہ، علاقائی اور بین الاقوامی شعبوں میں ہمارے تعاون اور ہم آہنگی کی سطح کو بڑھانے کی ضرورت ہے۔

 ایرانی صدر نے کہا کہ دنیا کے سامراجی اور حد سے تجاوز کرنے والے ممالک آزاد اور آزادی پسند قوموں کی کوششوں کو حقیر سمجھتے ہیں اور اس کے خلاف سازش کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ بلاشبہ ایران اور لاطینی امریکی ممالک کے درمیان تعاون کی سطح میں اضافہ امریکی اور دیگر ان کو غیر فعال بنا سکتا ہے۔

اس موقع پر البا یونین کے سیکرٹر جنرل نے بھی اس یونین کے 9 ممبر ممالک کے نمائندے کی حیثیت سے تقریب حلف برادری میں حصہ لینے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ البا یونین کا مقصد البا رکن ممالک اور اسلامی جمہوریہ ایران کے درمیان تعلقات کو مزید بڑھانا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور البا یونین میں بہت زیادہ مشترکات ہیں اور دونوں قوموں کی آزادی اور خودمختاری کا دفاع کرنے اور امریکی جبر کے خلاف کھڑے ہونے کی کوشش کرتے ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha