ایران بحری جہازوں کی محفوظ نقل و حرکت کا حامی ہے

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ ہم خلیج فارس اور آزاد پانیوں میں بحری جہازوں کی محفوظ نقل و حرکت کے حامی ہیں۔

انہوں نے مزید کہا اسلامی جمہوریہ ایران کو اپنی سلامتی اور قومی مفادات کے تحفظ میں کوئی ہچکچاہٹ نہیں ہے اور کسی بھی ممکنہ مہم جوئی کا فوری اور سنجیدگی سے جواب دے گا۔

"سعید خطیب زادہ" نے برطانوی سیکریٹری خارجہ کیجانب سے اسلامی جمہوریہ ایران پر لگائے گئے بے بنیاد اور اشتعال انگیز الزامات پر گہرے افسوس کا اظہار کیا اور ان کی مذمت کی جو امریکی وزیر خارجہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے دہرائے گئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ مربوط بیانات خود متضاد جملے پر مشتمل ہیں، جیسے کہ وہ پہلے اسلامی جمہوریہ ایران پر کوئی ثبوت فراہم کیے بغیر الزام لگاتے ہیں اور پھر اس کے "امکان" کی بات کرتے ہیں۔

خطیب زادہ نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران خلیج فارس اور بین الاقوامی پانیوں میں محفوظ اور بے ضرر جہاز رانی کا محافظ اور حامی ہے، جس کی خلیج فارس میں سب سے بڑی آبی سرحد ہے اور وہ خطے کے ممالک کے ساتھ سمندری سلامتی کی فراہمی میں ہمیشہ تعاون کیلئے تیار ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایران، خلیج فارس اور اس کے ہمسایہ ممالک کے پانیوں میں علاقائی قوتوں کی موجودگی اور مداخلت کو خطے کے استحکام اور سلامتی کیلئے نقصان دہ سمجھتا ہے۔

خطیب زادہ نے کہا کہ بڑی افسوس کی بات ہے کہ یہ ممالک دہشت گردوں کے حملوں اور بحیرہ احمر اور بین الاقوامی پانیوں میں ایرانی تجارتی جہازوں کیخلاف دہشتگردانہ حملوں اور تخریبکاارنہ اقدامات کیخلاف خاموش تھے اب وہ واضح سیاسی تعصب میں یہ اسلامی جمہوریہ ایران پر جھوٹے الزامات عائد کرتے ہیں؛ اگر ان ممالک کو اپنے جھوٹے دعووں کو ثابت کرنے کے لیے کوئی دستاویز اور ثبوت ہے تو انہیں پیش کرلیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha