دبئی ایکپسو ایرانی مصنوعات کو دنیا میں متعارف کرانے کا ایک اچھا موقع ہے

تہران، ارنا- ایران اور متحدہ عرب امارات کے مشترکہ چیمبر آف کامرس کے سربراہ نے کہا ہے کہ دبئی ایکسپو ایرانی مصنوعات کی برامدات میں اضافہ کرنے سمیت دو سالوں کے بعد سیاحتی صنعت میں رونقیں بڑھانے کا ایک اچھا موقع ہے۔

"فرشید فرزانگان" نے اتوار کے روز کہا کہ پیشن گوئیاں سے ظاہر ہوتا ہے کہ دبئی، دسیوں لاکھوں سیاحوں کی ایکسپو میں شرکت کا منصوبہ بنا رہا ہے اور یہ بحیثیت خوراک اور زراعت کی برآمدات کے شعبے میں بڑی صلاحیت رکھنے والا ملک یعنی ایران کیلئے ایک انوکھا موقع ہوسکتا ہے۔

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ سیاحت کی صنعت کو اب سے نہ صرف ایرانی سیاحوں کو بھیجنے بلکہ لاکھوں غیر ملکی سیاحوں کو راغب کرنے کی متعدد منصوبوں کی تیاری کرنی ہوگی۔

فرزانگان نے اس امید کا اظہار کردیا کہ نئی ایرانی حکومت، دبئی ایکسپو کی نمائش کی اہمیت پر توجہ دینے اور صحیح منصوبہ بندی کرنے سے قومی پیداوار کی مہم و نیز علاقائی ممالک سے اقتصادی تعاون بڑھانے کے سلسلے میں اس موقع سے اچھا فائدہ اٹھا سکے گی۔

ایران اور متحدہ عرب امارات کے مشترکہ چیمبر آف کامرس کے سربراہ نے کہا کہ توقع کی جاتی ہے کہ 25 سے 40 ملین تک افراد اس نمائش کا دورہ کریں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ پروگرام اکتوبر سے اپریل تک جاری رہے گا اور دبئی نے اس تقریب کی میزبانی کے لئے 42 بلین ڈالر خرچ کیے ہیں۔

فرزانگان نے کہا کہ کوررنا وبا کے پھیلاؤ کے پیش نظر دبئی نے حفاظتی تدابیر پر عمل پیراہونے اور حتی کہ نمائش کا دورہ کرنے والوں کی ویکسینیشن کا اچھا بند و بست کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران، دبئی ایکسپو میں شرکت کیلئے تقریبا 8 سے 9 ملین ڈالر کے بجٹ کو مختص کیا ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha