25 بلین ڈالر سرمایہ کاری کیساتھ پیٹرو کیمیکل صلاحیت میں 60 فیصد اضافہ

تہران، ارنا- ایران کی پیٹرو کیمیکل صلاحیت کی شرح 1392 میں 56 ملین ٹن سے بڑھ کر موجودہ صورتحال میں 90 ملین ٹن ہوگئی ہے ، جس صنعت میں 25 بلین ڈالر کی سرمایہ کاری کے ساتھ ‎ پیٹرو کیمیکل صلاحیت میں 60 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

چھٹے ترقیاتی منصوبے کے اہداف کے حصول میں پیٹروکیمیکل صنعت کو ملک کی سب سے کامیاب صنعت سمجھا جاسکتا ہے۔ چھٹے منصوبے کے مطابق ، اس صنعت کی گنجائش کو 1400 کے آخر تک سالانہ 100 ملین ٹن تک پہنچنا چاہیے جو دوسری چھلانگ میں پیٹرو کیمیکل منصوبوں کے افتتاح کے ساتھ اس گنجائش تک پہنچ سکتے ہیں۔

ایران کی پیٹرو کیمیکل صلاحیت کی شرح 1392 میں 56 ملین ٹن سے بڑھ کر موجودہ صورتحال میں 90 ملین ٹن ہوگئی ہے ، جس صنعت میں 25 بلین ڈالر کی سرمایہ کاری کے ساتھ ‎ پیٹرو کیمیکل صلاحیت میں 60 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

در حقیقت ہمیں ان آٹھ سالوں کو پیٹرو کیمیکلز کے سنہری دور کو سمجھنا چاہئے۔ گیارہویں اور بارہویں حکومتوں میں ، 34 ملین ٹن کی گنجائش کے ساتھ 32 پیٹرو کیمیکل منصوبوں کا افتتاح کیا گیا۔ اور پیٹرو کیمیکل صلاحیت 56 ملین ٹن سے بڑھ کر 90ملین ٹن سے زیادہ ہوگئی ہے۔

پچھلے آٹھ سالوں میں پیٹرو کیمیکل صنعت میں کل سرمایہ کاری  25 بلین ڈالر سے زیادہ رہی ہے۔ صدر کے کہنے کے مطابق اس رقم میں سے صرف 1399 میں پیٹرو کیمیکل صنعت میں 11 بلین ڈالر سے زیادہ کی سرمایہ کاری ہوئی ہے۔

 ایران کی پیٹروکیمیکل پیداواری صلاحیت میں پچھلے سال 12 منصوبوں کے افتتاح کے ساتھ 13.5 ملین ٹن کا اضافہ ہوا ہےاور گزشتہ سال کے آخر تک 50فیصد اضافہ دیکھنےمیں آیا۔

دوسری چھلانگ کے منصوبوں کا افتتاح 1400 میں کیا جائے گا تاکہ پیٹرو کیمیکل صنعت سے ایران کی آمدنی 25 بلین ڈالر سالانہ تک پہنچے۔

اس صنعت کی دوسری چھلانگ سے باقی منصوبوں کی ترقی کی شرح٪ 84 فیصد ہے ، اور ان کے افتتاح سے ملک کی پیٹرو کیمیکل کا حجم بڑھ کر ۱.۶ ملین بیرل خام تیل ہوسکتا ہے۔

اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

https://twitter.com/IRNAURDU1

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha