ادب کے تخلیقی شہر کی حیثیت سے تبریز شہر کے کیس کو یونیسکو بھیجا گیا

تبریز، ارنا- تبریز کے میئر نے کہا ہے کہ ادب کے تخلیقی شہر کی حیثیت سے تبریز شہر کے کیس کو عالمی ثقافتی تنظیم یونیسکو بھیجا گیا ہے۔

"ایرج شہین باہر" نے جمعہ کے روز ارنا نمائندے کیساتھ گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ تبریز ممتاز فنکارانہ اور ادبی دبستانوں کی اصل ہے اور یہ شہر گزشتہ ایک ہزار سالوں کے دوران، بہت سارے شاعروں اور ادبیوں بشمول "صائب تبریزی"، "شمس تبریزی"، "ملامحمد فضولی"، "محمد حسین شہریار"، "ہمام تبریزی" اور "پروین اعتصامی" کے ملنے جلنے اور رہنے کہ جگہ تھی۔

انہوں نے مزید کہا کہ تبریز عالمی سطح پر تعاون کرنے اور ادب کے میدان میں تخلیقی شہر کا اعزاز حاصل کرنے  کیلئے انتہائی قابل قدر اور وسیع گنجائش رکھتا ہے اور ہم نے اس اہم مقصد کو حاصل کرنے مہینوں پہلے ہی اقدامات اٹھائے ہیں۔

شہین باہر نے کہا کہ  اس سے قبل، ثقافتی کمیشن اور اسلامی کونسل آف تبریز نے تخلیقی دنیا کے شہروں کے نیٹ ورک میں شامل ہونے کیلئے ایک بل منظور کیا جس کے بعد تہران میں تعنیات یونیسکو کے ماہرین نے تبریز میونسپلٹی کا دورہ کیا اور پھر ادب کے میدان میں اس شہر کی ثقافتی اور تاریخی صلاحیتوں پر مبنی متعلقہ فارموں کو مکمل کرنے کیلئے ضروری اور خصوصی اقدامات اٹھائے گئے۔

تبریز کے میئر نے اس امید کا اظہار کرلیا کہ ادب کے میدان میں اس شہر کو تخلیقی شہر کی حیثیت سے انتخاب کو حتمی شکل دینے کیساتھ ہم ثقافت، سیاحت اور معیشت کے شعبوں میں اس اچھے واقعے کے ٹھوس اثرات کا مشاہدہ کریں گے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha