ایران اور فن لینڈ نے زمین اور کان کنی کے شعبے میں تعاون کو فروغ دینے پر زور دیا

تہران، ارنا- ایران اور فن لینڈ کی جیولوجیکل تنظیموں کے سربراہوں نے زمین اور کان کنی کے شعبوں میں باہمی تعاون کے فروغ پر زور دیا۔

فن لینڈ میں تعینات ایرانی سفیر فروزندہ ودیعتی نے ایران اور فن لینڈ کی جیولوجیکل تنظیموں کے درمیان مشترکہ ویبنار میں اس نشست کی اہمیت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ تہران میں تعینات فن لینڈ کے سفیر کیجونور وانتو کی جدو جہد کو سراہا۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی حکومت کا مقصد فن لینڈ کے ساتھ تمام شعبوں میں دوطرفہ تعاون کو بڑھانا اور مستحکم کرنا ہے۔

فن لینڈ میں اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر نے مغربی ایشیاء میں ایران کی جیولوجیکل تنظیم کی سرگرمیان منفرد اور بے نظیر ہیں اور فن لینڈ کی جیولوجیکل تنظیم بھی یورپ میں بہت اچھا مرکز ہے۔

ایرانی سفیر نے مغربی ایشیاء اور مشرق وسطی میں جیولوجی کے شعبے میں ایران اور فن لینڈ کے مابین تعلیمی تعاون اور سائنسی تبادلے کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ معدنیات، واٹر اینڈ سیوریج اور پانی کی پروسیسنگ کی اہمیت کا حوالہ دیا۔

انہوں نے ہمارے خطے میں خشک سالی کے رجحان کے باوجود آبی وسائل کا انتظام ، خاص طور پر زمینی پانی کے شعبے میں باہمی تعاون کو بڑھانا ضروری ہے۔

ودیعتی نے بتایا کہ ایران اور فن لینڈ دونوں کو ارضیات کے مختلف شعبوں میں طویل تجربہ ہے جن تجربات سے فائدہ اٹھ سکتے ہیں۔

نائب ایرانی وزیر برائے صنعت، تجارت اور کان کنی کے امور اور  ایرانی ارضیات اور معدنی ریسرچ کی تنظیم کے سربراہ 'علیرضا شہیدی' نے کہا کہ ایران اور فن لینڈ کے سفیروں کی کوششوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے قدرتی خطرات سے نمٹنے کے لئے علاقائی اور بین الاقوامی سائنسی تعاون کی ترقی پر زور دیا۔

شہیدی نے کہا کہ امید ہے کہ ارضیاتی تنظیموں کے مابین علاقائی اور بین الاقوامی سائنسی تعاون، ہم کچھ پریشانیوں پر قابو پا سکیں گے۔

اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha