17 مئی، 2021 6:21 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 84332741
0 Persons
ایرانی وزیر خارجہ کی پوپ فرانسس سے ملاقات

تہران، ارنا- ویٹیکن کے دورے پر آئے ہوئے ایرانی وزیر خارجہ نے آج بروز پیر کو پوپ فرانسس سے ملاقات اور گفتگو کی۔

ایرانی محکمہ خارجہ کے شعبہ تعلقات عامہ کے مطابق، "محمد جواد ظریف" نے آج بروز پیر کو دنیا کے کیتھولک کے رہنما پوپ فرانسس سے ملاقات اور گفتگو کی۔

اس موقع پر ظریف نے امریکہ کیجانب سے ایران کیخلاف ظالمانہ پابندیوں بالخصوص ادویات اور ویکسین کی فراہمی میں ایران کیخلاف معاشی جنگ پر تبصرہ کرتے ہوئے اس حوالے سے پوپ فرانسس کے تعمیری موقف کا شکریہ ادا کیا۔

ایرانی وزیر خارجہ نے مختلف مذاہب کیجانب سے فلسطین عوام کیخلاف مسلط کردہ سخت صورتحال سے متعلق پوپ فرانسس کا مثبت موقف اپنانے کا شکریہ بھی کیا۔

اس ملاقات میں، عالمی برادری میں اخلاقی اصولوں کے میدان میں الہی مذاہب کے مشترکہ نظریہ کے ساتھ ساتھ خاندان کی اہمیت کی حمایت، جیسے اہم امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

ظریف نے پوپ فرانسس سے ملاقات کے بعد ویٹیکن میں اپنی ملاقاتوں کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ان ملاقاتوں میں بین الاقوامی صورتحال، ایران کیخلاف عائد پابندیوں، اسلامی معاشرے میں اخلاق کا کردار، خاندان کی اہمیت کی حمایت اور فلسطین کی صورتحال پر گفتگو کی گئی۔

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ انہوں نے پوپ فرانسس سے ملاقات کے بعد ویٹیکن کے وزیر خارجہ اور وزیر اعظم سے ملاقات کی اور مذکورہ مسائل سمیت ایران اور ویٹیکن کے تعلقات پر مذاکرات کیے۔

ظریف نے اپنی حالیہ ملاقاتوں کو اہم اور تعیمری قرار دیتے ہوئے مقبوضہ فلسطین میں حالیہ واقعات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ فلسطینی عوام کی حالیہ صورتحال افسوسناک ہے؛ اس کے علاوہ لبنان کیخلاف عائد پابندیوں نے عوام پر بُرے اثرات مرتب کیے ہیں اور اور کیتھولک چرچ لبنان کی صورتحال پر حساس ہے؛ اس حوالے سے تعمیری مذاکرات کیے گئے۔

واضح رہے کہ ایرانی وزیر خارجہ نے اس سے پہلے ویٹیکن کے وزیر اعظم "کاردینال پارولین"، وزیر خارجہ اور آرچ بشپ "کالاگر" سے ملاقاتیں کی تھیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ ایرانی وزیر خارجہ گزشتہ روز کے دوران، اطالوی اور ویٹیکن کے حکام سے ملاقات کیلئے روم کے دورے پر پہنچ گئے جہاں انہوں نے اپنے اطالوی ہم منصب "لویی جی دی مایو" سے ملاقات اور گفتگو کی۔

اس موقع پر دونوں فریقین نے علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر مختلف شعبوں میں تعلقات کے فروغ پر تبادلہ خیال کیا۔

 خیال رہے کہ ظریف نے دورے اٹلی سے پہلے میڈریڈ کا دورہ کیا اور سپین حکام سے باہمی، علاقائی اور بین الاقوامی تعاون پر گفتگو کی تھی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha