ایرانی صدر کی ہدایت سے 94 تعمیراتی اور انفراسٹرکچر منصوبوں کے نفاذ کا آغاز

تہران، ارنا- ایران کے آزاد تجارت، صنعتی اور خصوصی معاشی زون کی تنظیم میں 94 تعمیراتی اور بنیادی ڈھانچے کے منصوبوں کا بروز جمعرات اور عیدالفطر کے موقع پر صدر مملکت کی ہدایت سے نفاذ کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق، ڈاکٹر حس روحانی نے ایک ویڈیو کانفرنس کے ذریعے سلفچگان، ارس، اروند، چابہار، قشم اور البرز کے آزاد تجارت، صنعتی اور خصوصی معاشی زون کی تنظیم میں 94 تعمیراتی اور بنیادی ڈھانچے کے منصوبوں کے نفاذ کی ہدایت دی۔

ان منصوبوں کے نفاذ پر مجموعی طور پر 6 ہزار 200 ارب تومان (ایرانی قومی کرنسی) کی سرمایہ کاری کی گئی ہے اور ان کے آپریشنل سے 2 ہزار 943 افراد کیلئے براہ راست روزگار کی فراہمی ہوگی۔

اس تقریب کے موقع پر ڈاکٹر روحانی نے شلمچہ- بصرہ ریلوے لائن کے منسلک ہونے کے منصوبے کی اہمیت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا حکومت، حالیہ مہینوں میں سیاسی اور عملی طور پر اس منصوبے پر عمل پیرا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس منصوبے کے نفاذ کے ساتھ ہی ایران، عراق، شام اور بحیرہ روم سے منسلک ہوجائے گا اور ہم خطے میں بنیادی تبدیلی کا مشاہدہ کریں گے۔

ایرانی صدر نے خرمشہر، شلمچہ اور آبادن کے اسٹریٹجک جغرافیائی محل وقوع پر تبصرہ کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ عراقی حکومت کے تعاون سے شلمچہ- بصرہ ریلوے لائن کے منصوبے کے نفاذ سے علاقے میں بنیادی تبدیلی کا مشاہدہ کر سکیں گے۔

انہوں نے کہا کہ اس منصوبے کے ابتدائی اقدامات اٹھائے گئے ہیں اور ہمیں امید ہے کہ اس کے نفاذ سے صوبے خوزستان اور اروند فری زون میں رونقیں بڑھنے لگیں گی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha