خاتون ایرانی موجد نے عالمی ایجادات کے مقابلوں میں دور رنگے برنگے تمغے جیت لیے

بجنورد، ارنا- ایرانی موجد ٹیم کے سربراہ نے کہا ہے کہ خاتون ایرانی طالبعلم "مبینا قزی" نے افریقہ میں منعقدہ عالمی ایجادات کے مقابلوں میں اعلی کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایک چاندی اور ایک کانسی کے تمغے جیت لیے۔

ان خیالات کا اظہار "امیر عباس کوشکی" نے آج بروز جمعرات کو ارنا نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ افریقہ میں منعقدہ عالمی ایجادات کے مقابلوں کے نتائج کا اعلان کیا گیا اور ایرانی علاقے اسفرائن سے تعلق رکھنے والی موجد مبینا قزی نے "سمارٹ ہسپٹال" کی پروجیکٹ کو پیش کرکے ایک کانسی کے تمغے کو اپنے نام کرلیا اور اس کے علاوہ انہوں نے "کورونا سے نمٹنے کیلئے سمارٹ روبوٹ" کی پروجیکٹ کو پیش کرکے ایک چاندی کے تمغے کو حاصل کرلیا۔

اس کے علاوہ ایرانی موجد ٹیم نے ٹیسلا عالمی ایجادات مقابلوں اور کروشین ایجادات مقابلوں میں کورونا سے متعلق اپنی ایجادات کو پیش کرکے ایک چاندی کا تمغہ جیت لیا۔

نیز ایرانی موجد ٹیم کے سربراہ نے ترکی میں منعقدہ عالمی ایجادات میں حصہ لیتے ہوئے "کورونا سے نمٹنے کی مشین" کی پروجیکٹ کو پیش کرکے ایک چاندی کا تمغہ جیت لیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان مقابلوں کا 2020ء اور 2021ء میں انعقاد کیا گیا تھا اور اب ان کے نتائج کا اعلان کیا گیا ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha