جوہری معاہدے کے خلاف ٹرمپ کی تمام پابندیوں کو ختم کرنا ہوگا: ظریف

تہران، ارنا-  ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے اجلاس میں اس معاہدے پر مکمل پابندی کے لئے ایک منطقی راستہ کا انتخاب کرتا ہے اور غیر معقول اور صوابدیدی امتیازات سے قطع نظر ٹرمپ کی تمام تر پابندیوں کو ختم کیا جانا چاہئے۔

یہ بات محمد جواد ظریف نے ٹوئٹر پر اپنے ذاتی اکاؤنٹ میں کہی۔

انہوں نے کہا کہ ایران جوہری معاہدے کی مکمل تعمیل کے لئے ایک منطقی راستہ پیش کرتا ہے۔ امریکہ جس بحران کی وجہ ہے، کو سب سے پہلے جوہری معاہدے میں واپس آئے اور ایران اس کی دیانتداری کی تصدیق کے بعد اپنے وعدوں پر بھی عمل کرے گا۔

انہوں نے بتایا کہ ٹرمپ کی ساری پابندیاں جوہری معاہدے کے مخالف ہے تو انہیں غیر معقول اور من مانی امتیازات اور پابندیوں سے قطع نظر ختم کیا جانا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق، جوہری معاہدے کے حوالے سے قائم جوائنٹ کمیشن  کے 18 ویں اجلاس کا دوسرا اجلاس منگل کے روز ویانا میں منعقد ہوا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

https://twitter.com/IRNAURD

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha