ایران میں یورینیم افزودگی کی گنجائش 16 ہزار 500 سو تک پہنچ چکی ہے

تہران، ارنا- ایرانی جوہری ادارے کے سربراہ نے جوہری صنعت کے قومی دن(9 اپریل) کی مناسبت سے اس شعبے میں نئی کامیابیوں کی رونمائی سے متعلق وضاحتیں پیش کرتے ہوئے کہا کہ اب ایران میں یورینیم افزودگی کی گنجائش 16 ہزار 500 سو تک پہنچ چکی ہے اور ہمارے پاس 57 کلوگرام 20 فیصد یورینیم ہے۔

ان خیالات کا اظہار "علی اکبر صالحی" نے آج بروز بدھ کو وزرا کے اجلاس کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے ایرانی جوہری صنعت کی قومی دن( 9 اپریل) پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اس حوالے سے ایک تقریب کا 10 اپریل میں انعقاد کیا جائے گا جس میں ایرانی صدر مملکت حصہ لیں گے اور وہاں اس شعبے میں 133 نئی کامیابیوں کی ایک نمائش کی صورت میں نقاب کشائی ہوگی۔

صالحی نے کہا کہ، ڈاکٹر حسن روحانی کے ذریعے 6 اور 7 نئی کامیابیوں کی رونمائی ہوگی جن میں سب سے اہم ریڈیو فرماسٹیکلز ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جوہری ادارے کے زیر اہتمام میں لاحق بیماریوں سے دوچار دس لاکھ افرد کیلئے  ادویات تیار کی گئی ہیں اور ہرسال نئی ادویات کی پیداوار میں اضافہ ہوتا جار رہا ہے۔

ایرانی جوہری ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ ہمارے پاس 15 نئی اقسام کے سینٹری فیوجز بشمول آئی آر 4، آئی آر 6 اور آئی آر 2 ایم ہیں جو یورینیم کو افزودہ کرتے ہیں؛  بکہ 2013 میں ہم صرف آئی آر 1 سے یورینیم کو افزود کردیتے تھے اور یہ ترقی ہمارے لیئے انتہایی قابل قدر ہے۔

انہوں نے کہا کہ جوہری معاہدے پر دستخط سے پہلے ہماری یورینیم افزودگی کی صلاحیت 13000 سو تھی جبکہ اب یہ 16500 سو تک پہنچ چکی ہے۔

صالحی نے کہا کہ آج ہمارے پاس تقریبا پانچ ٹن افزودہ یورینیم اور 57 کلوگرام 20 فیصد یورینیم موجود ہے اور ہمیں اس کی مقدار کو ایک ہی سال کے اندر 120 کلوگرام تک پہنچنے کا ارادہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ  یٹمی صنعت کی یہ حقیقتیں ہیں؛ دو منصوبوں، آئن تھراپی سینٹر اسپتال اور ٹیٹرا سنٹر کے علاوہ روس کی مدد سے بوشہر میں دو پاور پلانٹ تعمیر کیے جارہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ جوہری معاہدے سے پہلے ہمارے یلو کیک کی اوسط پیداوار سالانہ چار سے پانچ ٹن تھی جو اب 35 ٹن تک پہنچ چکی ہے۔

صالحی نے ویانا میں جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے اجلاس سے متعلق کہا کہ نائب ایرانی وزیر خارجہ سید عباس عراقچی کے مطابق، ایران کا موقف واضح ہے اور جب امریکہ ایران کیخلاف پابندیوں کو اٹھائے تب ایران بھی اپنے جوہری وعدوں پر پوارا اترے گا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha