کسی بھی یکطرفہ کارروائی کا قانونی طریقوں سے جواب دیں گے: ایرانی عہدیدار

تہران، ارنا - نائب ایرانی وزیر خارجہ برائے قانونی اور بین الاقوامی امور  نے  کہا ہے کہ یوکرائنی طیارے کے حادثے کا جائزے کے سلسلے میں بین الاقوامی قانون کے مطابق اپنے تمام فرائض کو پورا کردیا ہے اور کسی بھی یکطرفہ کارروائی کا قانونی طریقوں سے جواب دے گا۔

یہ بات محسن بہاروند نے بدھ کے روز یوکرائنی وزیر خارجہ اور ان کے نائب کے بیانات پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہی۔

انہوں نے کہا کہ ایران یوکرائنی طیارے کے حادثے کے لیے عالمی قوانین کے مطابق اپنے تمام فرائض پر عمل کیا ہے اور اس حوالے سے کسی بھی یکطرفہ اقدام اور کارروائی کا قانونی جواب دے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم میڈیا میں اپنے یوکرائنی ساتھیوں کے بیانات کو دیکھتے ہیں لیکن بعض اوقات ہم کچھ غیر تعمیری بیانات کی وجہ بھی نہیں سمجھتے ہیں۔

بہاروند نے یوکرین طیارے کے المناک حادثے کے سلسلے میں اسلامی جمہوریہ ایران کے اقدامات کے بارے میں کہا کہ حادثے کے جائے سے لے کر پیرس میں  بلیک باکس کو ڈی کوڈینگ کرنےمیں یوکرائنی حکومت کے نمائندے تحقیقات کے مختلف مراحل پر موجود ہیں۔

نائب وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ ہم نے کی یف اور تہران میں دو دور بات چیت کی ہے اور مختلف ایرانی اور یوکرائنی اداروں کے نمائندے نے حصہ لیا تھا جس میں اس واقعے کے وقوع کے طریقے کی وضاحت کی گئی۔

ایرانی عہدیدار نے بتایا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے اپنے تمام فرائض بین الاقوامی قانون کے مطابق سرانجام دیئے ہیں اور یہ انجام تک جاری رکھیں گے۔ اسی وجہ سے وہ کسی بھی اضافی بیانات یا کارروائی سے خوفزدہ نہیں ہے۔

بہاروند نے بتایا کہ ایران دوسرے ممالک کے ساتھ اپنے دوطرفہ تعلقات کا احترام کرتے ہوئے اپنی قومی خودمختاری کے دائرہ کار کے اندر کسی دباؤ یا خطرہ کو قبول نہیں کرتا ہے اور کسی بھی غیر معقول اقدام کے خلاف متناسب عمل کرے گا۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

https://twitter.com/IRNAURD

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha