ایران میں رواں سال کے دوران 60 ارب ڈالر کی بین الاقوامی تجارت

تہران، ارنا- ایرانی وزیر برائے تجارت، کان کنی اور صنعت کے امور نے کہا ہے کہ ملک میں رواں سال کے دوران، بین الاقوامی تجارت کی شرح 60 ارب ڈالر تک پہنچ گئی جو کورونا وبا اور ملک کیخلاف عائد پابندیوں کے باوجود انتہائی قابل قدر ہے۔

ان خیالات کا اظہار "علیرضا رزم حسینی" نے آج بروز جمعرات کو پیداوار کی راہ میں رکاوٹوں کو دور کرنے سے متعلق منعقدہ ایک اجلاس کے دوران، گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران میں رواں سال کے دوران، 34 ارب ڈالر کی برآمدات اور 37 ارب ڈالر بھی 37 ارب ڈالر کی درآمدات ہوئی ہیں جن میں سے اکثر بنیادی اور ضروری سامان تھیں۔

رزم حسینی نے 60 ارب ڈالر کی بین الاقوامی تجارت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ہماری پیداوار کی صورتحال مناسب ہے؛ بنیادی اور اسٹریٹجک مصنوعات کی فراہمی اور ذخیرہ کرنے کا سلسلہ جاری ہے۔

انہوں نے کہا کہ مرکزی بینک کے تعاون سے کرنسی کی فراہمی پر اقدامات اٹھائے گئے ہیں جن کا بنیادی مصنوعات کی درآمد کیلئے استعمال کیا جاتا ہے۔

ایرانی وزیر تجارت، صنعت اور کان کنی کے امور نے 29 مختلف شعبوں میں پیداوار کی ترقی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ رواں سال کے دوران، پیداوار میں 7 فیصد کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے اور توقع کی جاتی ہے کہ یہ 5۔7 فیصد تک پہنچ جائے گی۔

انہوں نے پیداوار کی راہ میں رکاوٹوں کو دور کرنے کی کوششوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ  رواں سال کے دوران، ایک ہزار 500 پیداواری یونٹوں کی بحال کی گئی اور آئندہ سال کے دوران، پیداوار کے فروغ سمیت برآمدات اور درآمدات میں مزید آسانی لانے کی کوشش کرتے ہیں۔

 **9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 10 =