ایران میں ٹائرانڈسٹری کی متعدد کلیدی مصنوعات کو مقامی بنایا گیا

تہران، ارنا- ایک ایرانی علم پر مبنی کمپنی میں ٹائر انڈسٹری کی متعدد کلیدی مصنوعات کو مقامی بنایا گیا۔

اس علم پر مبنی کمپنی کے سی ای او "محمد بابا زادہ مقصود لو" نے کہا کہ ہماری کمپنی کی سرگرمی، صنعتی کنٹرول سسٹم کے ڈیزائن اور تیاری کے شعبے میں ہے اور اس شعبے میں مختلف صنعتوں کو ایسے سامان اور آلات کی ضرورت ہے جو پہلے صرف درآمدات کے ذریعے فراہم کیے جاتے تھے۔

انہوں نے کہا کہ اس کمپنی کی  مصنوعات میں سے ایک ٹیسٹ ٹائر مشسن ہے؛ یہ مشین ایران میں تیار ہونے والے اور درآمد شدہ ٹائروں کے معیار کی پیمائش کیلئے استعمال ہوتی ہے جو بہت زیادہ قیمت پر درآمد کی جاتی ہے اور یہ کمپنی اسے بہت کم قیمت پر پیش کرنے میں کامیاب رہی ہے۔

مقصود لو نے ٹائر کی صنعت میں تمام سازو سامان کو مقامی بنانے کی کوششوں کے تسلسل پر زور دیتے ہوئے کمپنی کی دیگر مصنوعات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ کمپنی کی مصنوعات میں سے ایک رولر ٹائر ٹیسٹر ہے جو ٹائر کے معیار کو جانچنے کیلئے بھی استعمال ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس پروڈکٹ کو بیرون ملک سے تقریبا 16 ارب تومان (ایرانی قومی کرنسی) کی قیمت پر درآمد کیا گیا تھا؛ جبکہ ہم نے اسی طرح کی پروڈکٹ کو بہت کم قیمت سے پیش کیا ہے۔

مقصود لو کا کہنا ہے کہ اس کمپنی میں تیارکردہ مصنوعات کا معیار جنوب مشرقی ایشین ممالک سے کہیں زیادہ ہے اور یہ جرمنی میں اعلی یورپی برانڈز کے معیار کے برابر ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس سے قبل، فیکٹریوں کو اس مشین کے پرزے بدلنے میں ایک بہت بڑا مسئلہ درپیش تھا، کیونکہ غیر ملکی فروخت کرنے والوں نے مصنوع کی وارنٹی فراہم نہیں کی تھی اور نہ ہی مشین کی ریپر کیلئے کوی ماہر کو نہیں بھیجا تھا۔

انہوں نے کہا کہ اب ہم مکئی میں گلوکوز کی تبدیلی کی صنعت کیلئے ضروری سامان میں سے ایک کو ڈیزائن کر رہے ہیں، جس میں چار گنا کم پانی استعمال ہوتا ہے۔

 **9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 9 =