3 مارچ، 2021 4:13 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 84250321
0 Persons
ایران اور شام کا گاڑیوں کی تیاری کے معاہدے پر دستخط

تہران، ارنا- تہران اور دمشق نے شام میں کار تیار کرنے والی کمپنی "سیامکو" کے از سر نو نفاذ کیلئے باہمی تعاون کے معاہدے پر دستخط کیے۔

شامی "اثر" نیوز ایجنسی نے شام کے وزیر صنعت "زیاد صباغ" کے مطابق کہا ہے کہ نائب ایرانی صدر برائے سائنس اور ٹیکنالوجی کے امور "سورنا ستاری" اور دمشق میں تعینات ایرانی سفیر "جواد ترک آبادی" کی موجودگی میں اس معاہدے پر دستخط کیا گیا۔

شامی وزیر صنعت نے ستاری سے اپنے حالیہ اجلاس کو ملک کے اندرونی بحران کے خاتمے کے بعد صنعت اور معیشت کے شعبوں میں ترقی پر اقدامات اٹھانے کیلئے تعمیری اور اہم قرار دے دیا اور کہا کہ اس اجلاس میں شام میں کار تیار کرنے والی کمپنی "سیامکو" کے از سرنو نفاذ سے اتفاق کیا گیا۔

انہوں نے کہا کہ اس اجلاس میں شام کے اندرونی بحران کے نتیجے میں جو مشترکہ کریڈٹ لائن اور منصوبوں کو روکا گیا تھا ان کو دوبارہ متحرک کرنے کے علاوہ،  باہمی تعاون کے فروغ اور مشترکہ منصوبوں کے نفاذ  پر زور دیا گیا۔

در این اثنا سیامکو آٹوموٹو کمپنی کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ممبر "اسعد وردہ" نے کہا کہ اگر یہ کمپنی اپنی سرگرمیوں کی بحال کریں، تو 2 مہینوں کے اندر شام میں کار کی قیمتیں کم ہوجائیں گی۔

واضح رہے کہ سیامکو کار کمپنی کا قیام 2007 میں دمشق کے مضافات میں واقع صنعتی شہر ادرا میں ہوا تھا؛ اور اس نے شام میں پہلی تیارکردہ کار "شام کار" کی تیاری کی۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ شام میں کار کمپنیاں بشمول سیامکو، نومبر 2019 سے آٹو پارٹس کی درآمد روکنے کے بعد بند کردی گئی ہیں۔

شام نے غیر ملکی کاروں کی درآمد کو 2011 سے روک دیا ہے اور صرف آٹو پارٹس کی درآمد اور اسمبلی کی اجازت دی ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha