یورپ ایران کی اقتصادی کانفرنس، تجارتی تعاون کی ترقی کیلئے ایک پل

لندن، ارنا -  50 ممالک کے 4000 سے زیادہ شرکاء ایران کے ساتھ تجارتی تعلقات کی بحالی، یورپی یونین کے جامع نقطہ نظر کی حیثیت سے، پر تبادلہ خیال کرنے کے لئے کل (پیر) کو یورپ ایران کی اقتصادی کانفرنس میں جمع ہوگئیں۔

یورپین ایکسٹرنل ایکشن سروس کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل 'انریکہ مورا' نے اس اجلاس میں جو ورچوئل طور پر منعقد ہوا تھا۔ کہا کہ ایران کے ساتھ تعاون کو وسعت دینے کی نمایاں اقتصادی صلاحیت موجود ہے اور یوروپی یونین آنے والے سالوں میں تجارتی اور صنعتی تعلقات کے میدان میں مزید منصوبوں کو شروع کرنے کے لئے تیار ہے۔

اس اجلاس میں ایرانی وزیر خارجہ کے معاون اور ایرانی وزارت خارجہ کے ڈائریکٹر جنرل برائے مغربی یوروپ نے ایران کے خلاف سخت پابندیوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ 2017 کو ایران – یورپ کی تجارت کا حجم 21 ارب یورو سے کم ہوکر 4.5 ارب یورو ہوگئی ہے۔ لیکن ایران نے درپیش بڑے چیلنجوں کے باوجود یہ ثابت کردیا ہے کہ وہ پابندیوں کی شرائط میں بھی اپنے راستے پر چل سکتا ہے۔

بین الاقوامی تجارتی مرکز کے ڈائریکٹر جنرل نے بھی اجلاس میں ایران کی معیشت کو دنیا کی سب سے بڑی معیشت قرار دیتے ہوئے کہاکہ موجودہ پابندیوں اور چیلنجوں کے باوجود ایران اپنی گھریلو صلاحیت کو بروئے کار لا کر معاشی ترقی میں کامیاب ہوگیا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha