مثبت کارروائی کو مثبت جواب دیں گے: ایرانی وزرات خارجہ کا ترجمان

تہران، ارنا – ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ایران کے خلاف الزام لگانے اور دھمکیوں کی کوئی حیثیت نہیں ہے۔ ہم مثبت کارروائی کو مثبت جواب دیں گے اور اگر ہمیں کوئی مختلف اقدام دیکھیں تو ہم اس کا مناسب جواب دیں گے۔

 یہ بات سعید خطیب زادہ نے پیر کے روز ایک پریس کانفرنس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
انہوں نے مزید کہا کہ ایران کا موقف واضح ہے ، اس موقف میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔

ایرانی وزرارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ امریکہ کا راستہ سابقہ ​​امریکی انتظامیہ کی غلط پالیسیوں کو نفاذ کرنا ہے اور ایران مخالف پالیسی اور زیادہ سے زیادہ دباؤ کی پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔

وزارت خارجہ کے ترجمان نے جوہری معاہدے کے یورپی شراکت داروں سے اپیل کی کہ  وہ پہلے چلنے والے راستے پر غور کریں اور اس بات کو ذہن میں رکھیں کہ تعاون کا راستہ کسی بھی راستے سے بہتر ہے ۔ایران کے خلاف الزامات اور دھمکیوں کا راستہ کارآمد نہیں ہوگا اور باہمی تعاون کی راہ ایران کے لیے اہم ہے.

ایران کو جوہری ہتھیاروں کے حصول کی اجازت نہ دینے کے بارے میں نیٹن یاھو کے حالیہ تبصرے کے بارے میں انہوں نے کہاکہ بیت المقدس میں قابض ریاست مغربی ایشیاء کی بہت ساری پریشانیوں، بد امنی اور مسائل کی جڑ ہے۔

خطیب زادہ نے کہاکہ ایران اس صورتحال کو قریب سے دیکھ رہا ہے اور اس رجیم کے بدعنوان وزیز خارجہ کے الزامات کی کوئی حیثیت نہیں ہے اور ایران کی دفاعی حکمت عملی میں جوہری ہتھیار کی کوئی جگہ نہیں ہے لیکن مغربی دنیا نے اسرائیل کے سینکڑوں جوہری ہتھیاروں پر اپنی آنکھوں کو بند کردیا ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha