ایران کا آئی اے ای اے کو بورڈ آف گورنرز میں ملک کیخلاف ممکنہ قرارداد کی منظوری پر انتباہ

تہران، ارنا- ایرانی جوہری ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ اگر عالمی جوہری ادارے کے بورڈ آف گورنرز میں ایران کیخلاف کسی قرارداد کی منظوری ہوجائے تو ہم مناسب کاروائی کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار "علی اکبر صالحی" نے آج بروز اتوار کو پارلیمنٹ کے کمیشن برائے قومی سلامتی اور خارجہ پالیسی امور کے اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر عالمی جوہری ادارے کے بورڈ آف گورنرز میں ایران کیجانب سے ایڈیشنل پروٹوکول پر رضاکارانہ عمل درآمد کی روک تھام کیخلاف کسی قرارداد کی منظوری ہو جائے تو ہم مناسب کاروائی کریں گے اور اس حوالے سے آئی اے ای اے کو ایک خط بھی بھیجا گیا ہے۔

صالحی نے ایران پارلیمنٹ میں پابندیوں کی منسوخی سے متعق اسٹریٹجک اقدامات اٹھانے کے قانون تحت ایڈیشنل پروٹوکول پر عمل درآمد کی روک تھام سے متعلق ایران اور آئی اے ای اے کے درمیان اتفاق سے متعلق بیان کے اپنڈکس پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ اپنڈکس خفیہ ہے؛ اس سلسلے میں کوئی خاص شرائط موجود نہیں ہیں اور اس اپنڈکس میں مذکور تنصیبات اور نگرانی کے کیمروں کی فہرست سے متعلق تفصیلی معلومات، سیکیورٹی کے تحفظات اور ایرانی کلیدی تنصیبات کے مقام کو چھپانے کی ضرورت کے سبب، یہ اپنڈکس خفیہ رہے گا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha