مشہد میں آٹھویں بین الاقوامی نینو ٹیکنالوجی کانفرنس کا انعقاد

مشہد، ارنا- ایرانی شہر مشہد میں آٹھویں بین الاقوامی نینو ٹیکنالوجی کانفرنس کا مشہد میڈیکل سائنس یونیورسٹی کی میزبانی میں ورچوئل انعقاد کیا گیا جس میں اس شعبے میں سرگرم ملکی اور غیر ملکی ماہرین اور سائنسدانوں نے حصہ لیا۔

ان خیالات کا اظہار مشہد میڈیکل یونیورسٹی کے سربراہ ڈاکٹر "محمد حسین بحرینی" نے بدھ کے روز گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران، نینو ٹیکنالوجی کے 4 ترقی یافتہ ممالک میں شامل ہے اور ہمیں امید ہے کہ ملکی ماہرین کی کوششوں اور جدید سائنس کی حمایت سے ملک میں معاشی ترقی میں اضافہ ہوگا۔

بحرینی نے کہا کہ مشہد یونیورسٹی آف میڈیکل سائنسز کے محققین اور سائنسدان، حالیہ برسوں میں نینو میڈیسنز کے میدان میں بہت سرگرم اور کامیاب رہے ہیں اور وہ نینو ٹیکنالوجی پر مبنی کیموتھراپیٹک ادویات بنانے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ کورونا وبا کے پھیلاؤ کی وجہ سے آٹھویں بین الاقوامی نینو ٹیکنالوجی  کانفرنس کا ورچوئل انعقاد کیا گیا جس میں اس شعبے میں سرگرم ملکی اور غیر ملکی ماہرین اور سائنسدانوں نے حصہ لیا۔

بحرینی کا کہنا ہے کہ اس دو روزہ کانفرنس کے دوران، نینو ٹیکنالوجی کے شعبے میں جدیدترین کامیابیاں پیش کی جائیں گی۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ اس کانفرنس میں 430 مضامین بطور پوسٹر اور لکچر پیش کیے جاتے ہیں۔

واضح رہے کہ اس کانفرنس میں ایران، امریکہ، آسٹریلیا، جرمنی، برطانیہ، اور سوئڈن کے ممتاز سائنسدان تقریر کریں گے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 1 =