ایران جلد ہی دنیا کے سب سے بڑے ویکسین تیار کرنے والے ممالک میں شامل ہوگا

قزوین، ارنا- ایرانی وزیر صحت نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، آئندہ تین مہینوں تک دنیا کے سب سے بڑے کورونا ویکسین تیار کرنے والے ممالک میں شامل ہوگا۔

ان خیالات کا اظہار "سعید نمکی" نے پیر کے روز صوبے قزوین میں منعقدہ ایک اجلاس کے دوران، گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے ملک میں "برکت" اور "رازی" کی کورونا ویکسینوں کی تیاری کے مراحل کی وضاحت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم پاستور لیبارٹری میں ایک انتہائی موثر ویکسین تیار کررہے ہیں اور ہمیں امید ہے کہ مئی تک وہ مارکیٹ میں دستاب ہوں گی؛ کیونکہ اس ویکسین کے ابتدائی مراحل مکمل ہوچکے ہیں۔

نمکی نے ایران کیخلاف امریکی ظالمانہ پابندیوں اور اس کیجانب سے ویکسین کی درآمدات می راہ میں روڑے اٹکانے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے کورونا وبا کے دوران ایران کیخلاف سخت سے سخت پابندیاں عائد کی اور ہمیں ادویات اور خوراک کی درآمدات میں بہت مشکل حالات کا سامنا ہوا۔

انہوں نے ایران میں درآمد کی گئی روسی کورونا ویکسین اسپوٹنک وی کی اچھی کارکردگی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے چین سے بھی کورونا ویکسین کی درآمدات کی منصوبہ بندی کی ہے۔

وزیر صحت نے کہا کہ پچھلے سال کے دوران، ملک کے طبی مراکز میں 2500 آئی سی یو بیڈ شامل کیے گئے ہیں؛ وہ ایک ایسے وقت ہے جب گزشتہ سال کے دوران، ملک 20 ہزار افراد کو آکسیجن مہیا کرنے میں کامیاب رہا تھا ، لیکن آج  65 ہزار مریضوں کیلئے آکسیجن کی فراہمی کرسکتے ہیں جو اسلامی جمہوریہ کے لئے ایک بہت بڑا اعزاز ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha