شہید سلیمانی الہامی ادیان کے مظلوموں کے حامی تھے

تہران، ارنا- ایرانی کلیمین کے مذہبی رہنما نے جنرل سلیمانی کو الہامی ادیان کے مظلوموں کے حامی قرار دیتے ہوئے کہا کہ تمام شہداء، ایرانی قوم کے اتحاد و یکجہتی کی راہ کی نمائندگی کرتے ہیں، لیکن شہید سلیمانی نے بڑے پیمانے پر مظلوموں کے دفاع کا مظاہرہ کیا۔

ان خیالات کا اظہار "یونس حامی لالہ زار" نے آج بروز ہفتے کو ارنا نمائندے کیساتھ گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ جنرل سلیمانی نے عملی طور پر ثابت کیا کہ مظلوموں کا دفاع کوئی نعرہ نہیں ہے اور انہوں نے اپنے اعتقاد پر عمل کیا۔

حمامی لالہ زار نے کہا کہ شہید سلیمانی کیلئے کوئی فرق نہیں پڑتا تھا کہ وہ کس قوم اور مذہب کے مظلوموں کی حمایت کرتے ہیں؛ وہ تمام مذاہب کے پیروکاروں بشمول زرتشتی، عیسائی، مسلمان و۔۔۔ کے مظلوموں کے حامی تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جنرل سلیمانی نے دنیا کو دیکھایا کہ ہمیں بات کرنے کے بجائے اس راستے میں ایک قدم اٹھانا ہوگا اور مظلوموں کے پامال حقوق کا دفاع کرنا ہوگا۔

حمامی لالہ زار نے کہا کہ بعض اوقات، بعض افراد، صرف کسی خاص قوم اور مذہب کے ہیرو ہیں تاہم شہید سلیمانی نے خطے کے مظلوم لوگوں کے دفاع کے لئے اپنی جان قربان کردی اور تمام الہامی ادیان کے مظلوموں کی حمایت کی۔

انہوں نے مزید کہا کہ میرا عقیدہ ہے کہ تمام خطے کی اقوام، شہید سلیمانی کی قربانیوں کی مرہون منت ہیں۔

حمامی لالہ زار نے کہا کہ جنرل سلیمانی  نے یہ ظاہر کیا کہ الہامی ادیان کے عقیدے کے مطابق مظلوموں کی حمایت، کسی خاص مذہب کے اعتقاد سے بالاتر ہے اور انہوں نے دنیا کے آزادی پسندوں کو یہ ثابت کردیا کہ مظلوموں کی حمایت کرنے کی کوئی سرحد نہیں ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha