قانونی تعلقات کو بہتر بنانے کیلئے عراقی عدالتی عہدیداروں سے مذاکرات کریں گے

تہران، ارنا- ایرانی عدلیہ کے سربراہ نے دورہ عراق کی روانگی سے پہلے کہا ہے کہ اس دورے میں قانونی اور عدالتی تعلقات کو بہتر بنانے کیلئےعراق کے عدالتی عہدیداروں سے مذاکرات کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار علامہ "سید ابراہیم رئیسی" نے آج بروز پیر کو ایک پریس کانفرنس کے دوران، گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ وہ عراقی جوڈیشل کونسل کے چیئرمین "فائق زیدان" کی دعوت پر بغداد کے دورے پر جائیں گے؛ جہاں وہ سپریم جوڈیشل کونسل کے صدر، صدر مملکت، وزیر اعظم اور عراق کے دیگر عہدیداروں سے ملاقاتیں کریں گے۔

علامہ رئیسی نے ایران اور عراق کے درمیان سیاسی، معاشرتی، معاشی اور اقتصادی شعبوں میں اچھے اور تعمیری تعلقات پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی اور عراقی قوموں کے درمیان گہرے قریبی تعلقات ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ عراق سے ملحقہ سرحد، سرحدی تبادلے، تجارت، ٹریفک اور عازمین حج کی روانگی سے قانونی اور عدالتی تعلقات قائم ہوجاتے ہیں اور اس سفر میں قانونی اور عدالتی تعلقات کو بہتر بنانے کے لئے عراقی عدالتی عہدیداروں سے بات چیت کی جائے گی۔

علامہ رئیسی نے کہا کہ ایرانی اور عراقی قیدیوں کے مسائل کا اس دورے میں جائزہ لیا جائے گا اور اس حوالے سے دونوں ملکوں کے درمیان مفاہتمی یادداشتوں پر دستخط ہوں گے جن کے نفاذ سے دونوں ملکوں کے تعلقات میں مزید بہتری اور مضبوطی آئے گی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha