ایران، جینیاتی جانچ کے آلات کے معاملے میں یورپی معیاروں سے اوپر ہے

زنجان، ارنا- فرانزک میڈیسن آرگنائزیشن کے نائب وزیر تعلیم و ریسرچ نے کہا ہے فی الحال، ملک کے 10 صوبوں میں جینیاتیات کی لیبارٹریز سرگرم عمل ہیں اور قانونی جینیاتی جانچ کے آلات کی تقسیم کے معیار کی تعمیل کے معاملے میں، ایران یورپی معیاروں سے اوپر ہے۔

ان خیالات کا اظہار"سید امیر حسین مہدوی" نے اتوار کے روز صوبے زنجان میں منعقدہ ایک تقریب کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

 انہوں نے مزید کہا کہ جینیٹکس کی لیبارٹریز ملک کے 21 صوبوں میں فعال نہیں ہیں کیونکہ ان لیبارٹریوں کا قیام تمام صوبوں کے لئے نہ ممکن ہے اور نہ ضروری۔

مہدوی نے کہا کہ جرائم کے انکشاف کے لئے ملک بھر میں فارنسک جینیات کی 10 لیبارٹریز ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یوکرائنی طیارے حادثے سے متعلق، تہران میں ہونے والی فارنزک میڈیسن آرگنائزیشن کی خدمات کا مقابلہ دنیا کے کسی بھی دوسرے ملک سے نہیں کیا جاسکتا، کیونکہ ہم نے ایک ہفتہ سے بھی کم عرصے میں، تمام جاں بحق ہونے والے افراد کی شناخت کردی۔

مہدوی نے کہا کہ اس حادثے میں جاں بحق ہونے والوں میں سے کچھ کی لاشیں بیرون ملک بھیج کر بھی اس کی تصدیق کی گئی۔

انہوں نے کہا کہ لاشوں کی شناخت کی لیبارٹری کے تمام دستاویزات کو بین الاقوامی سطح پر منظوری دے دی گئی تھی، اور کوئی بھی اس پر ذرا بھی اعتراض نہیں کرسکتا تھا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha