ایران سے تعلقات کی توسیع کے خواہاں ہیں: مونٹی نیگرو اسپیکر

بلغراد، ارنا- مونٹی نیگرو کی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے پوڈگوریکا میں تعینات اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر سے ایک ملاقات میں کہا ہے ہم کہ خارجہ پالیسی میں ہم یورپی یونین میں رکنیت اور ٹرانس اٹلانٹک تعاون کے خواہاں ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ مونٹی نیگرو، سابق یوگوسلاویا کیساتھ ایران کے اچھے تعاون کی بحالی اور بڑھانے پر یقین رکھتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار "آلکسا بچیچ" نے بدھ کے روز "رشید حسن پور" سے ایک ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر انہوں نے اپنے ایرانی ہم منصب "محمد باقر قالیباف" کو انہیں مبارکباد کا پیغام دینے پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وبا کی وجہ سے بہت سارے ممالک بشمول ایران میں متعدد افراد جاں بجق ہوگئے ہیں۔

انہوں نے اس حوالے سے ایرانی حکومت اور عوام سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ ہم جلد از جلد اس وبا پر قابو پاسکیں گے۔

مونٹی نیگرو پارلیمنٹ کے اسپیکر نے کہا کہ اندرونی پالیسی میں ہم شہری ڈھانچے کو مضبوط بنانے، بدعنوانی کے خلاف جنگ اور عدلیہ کو عوام اور ہمارے بین الاقوامی شراکت داروں کی  درخواست کے مطابق تعمیری بنانے کی کوشش کرتے ہیں۔

بچیچ نے کہا کہ خارجہ پالیسی میں ہم یوروپی یونین میں رکنیت اور ٹرانس اٹلانٹک تعاون کے خواہاں ہیں؛ ہمارے ملک میں، یوروپی یونین میں رکنیت سے متعلق اتفاق رائے ہے اور دیگر ملکوں سے تعلقات کی توسیع بھی ہماری ترجیحات میں ہے۔

 انہوں نے مزید کہا کہ مونٹی نیگرو، سابق یوگوسلاویا کیساتھ ایران کے اچھے تعاون کی بحالی اور بڑھانے پر یقین رکھتا ہے اور اس حوالے سے پارلیمانی تعاون، موثر کردار ادا کر سکتا ہے۔

اس موقع پر ایرانی سفیر نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ان کا ملک تمام شعبوں بالخصوص توانائی، نقل و حمل، زراعت اور سیاحت میں مونٹی نیگرو سے تعلقات کے فروغ میں دلچسبی رکھتا ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha