تہران اور پراگ کا عوامی نقل و حمل کے میدان میں تجربات کا تبادلہ

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران میں تعینات چیک کے سفیر اور تہران کے میئر نے ایک ملاقات میں عوامی نقل و حمل بالخصوص سٹی ٹرینوں اور الیکٹرک بسوں کی تعمیر پر تجربات کے تبادلہ پر زور دیا۔

تفصیلات کے مطابق "پیروز حناچی" نے آج بروز منگل کو "جوزف ریختار" کیساتھ ایک ملاقات میں عوامی نقل و حمل کے شعبے میں تہران اور پراک کے درمیان تعاون کا مطالبہ کیا۔

اس موقع پر چیک کے سفیر نے تہران شہر کی خوبصورتیوں کو سراہتے ہوئے حناچی سے دورہ پراک کی دعوت دی۔

انہوں نے عوامی نقل و حمل کی توسیع سے متعلق باہمی تعاون کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ جمہوریہ چیک کے پاس سٹی ٹرینوں اور الیکٹرک بسوں کی تعمیر میں تجربات ہیں اور وہ ان تجربات کو ایران سے شئیر کرنے پر تیار ہے۔

اس کے علاوہ دونوں فریقین نے کورونا وبا کیخلاف لڑنے سے متعلق تجربات پر گفتگو کی۔

در این اثنا چیک کے سفیر نے کورونا کیخلاف مقابلہ کرنے کیلئے تہران کے اچھے تجربات پر تبصرہ کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کرلیا کہ جلد از جلد اس وبا پر قابو پر سکیں گے۔

تہران کے میئر نے ایران کیخلاف امریکی پابندیوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ہم بیک وقت کورونا اور پابندیوں کیخلاف لڑ رہے تھے جس کی وجہ سے ہمیں بہت سارے مشکلات کا سامنا ہوا۔

چیک کے سفیر نے بھی امریکی پابندیوں سے مخالفت کا اظہار کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ امریکہ کی نئی حکومت میں ایران کیخلاف پابندیوں کی منسوخی ہوگی اور دونوں ملکوں کے درمیان تعاون کی فضا کی فراہمی ہوگی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha