ایران کی کیوبا کو دہشتگردی کے حامی ممالک کی فہرست میں قرار دینے کی مذمت

تہران، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے امریکہ کیجانب سے کیوبا کے نام کو دہشتگردی کے حامی ممالک کی فہرست میں قرار دینے کی سختی سے مذمت کرتے ہوئے عالمی سامراجیت کیخلاف مزاحمت میں کیویا کی حکومت اور قوم کی امنگوں سے یکجہتی کا اظہار کرلیا۔

سعید خطیب زادہ نے مزید کہا کہ یہ دعوی کہ کیوبا نے وینزویلا کیساتھ دہشت گردی کے میدان میں تعاون کیا ہے، امریکیوں کے دیگر بے بنیاد الزامات کی طرح، ان کے مخالفین پر جھوٹے الزامات عائد کرنے کی مکروہ عادت کا نتیجہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ ٹرمپ کی ناکام انتظامیہ نے پوری دنیا میں تناؤ کا باعث بن چکے ہیں اور انہوں نے بین الاقوامی فوائد کو مجروح کرنے اور امریکہ سے نفرت پیدا کرنے کے سوا کچھ نہیں کیا ہے۔

خطیب زادہ نے کہا کہ وہ اپنے ملک کی کانگریس کے حالیہ معاملے میں اپنی سرکش نوعیت کا اعادہ کیا اور وہ اپنی زندگی کے آخری ایام میں بے بنیاد اور یکطرفہ کارروائی کرتے رہتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکی دہشتگرد حکومت کو یہ یاد دلانے کی ضرورت ہے کہ اقوام متحدہ کے ایک سرگرم رکن اور اپنی قومی خودمختاری کے حصول کے لئے سامراج اور عالمی استکبار کے خلاف جنگ میں پیش قدمی رکھنے والا کیوبا، لاطینی امریکہ یا کہیں اور اپنے پڑوسیوں کیساتھ تعلقات قائم کرنے کیلئے مکمل طور پر آزاد ہے۔

خطیب زادہ نے کہا کہ کسی بھی ملک بالخصوص امریکی حکومت کو یہ حق حاصل نہیں ہے کہ وہ کیوبا کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرے یا اس آزاد ملک اور دوسرے آزاد ملک کے مابین تعلقات کے قیام کا حکم دے یا منع کرے۔

انہوں نے کہا کہ ہم امریکی دہشتگرد حکومت اور اس کے سیاسی عہدیداروں کے اس اقدام کو بھی شہید سلیمانی کے قتل میں دہشت گردی کی کارروائیوں کی ہدایت اور رہنمائی کرنے کے ساتھ ساتھ داعش اور دیگر دہشت گرد گروہوں کی کارروائیوں کی حمایت اور ہدایت کرنے کی وجہ سے مسترد کرتے ہیں اور کیوبا کیساتھ اپنے تعلقات کو مستحکم کرنے کے پختہ عزم پر زور دیتے ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha