ٹرمپ نے ایک بار پھر جوہری معاہدے سے متعلق اپنی پالیسی کی تنہائی کا مظاہرہ کیا: ایران

لندن، ارنا – برطانیہ میں تعینات ایرانی سفیر نے اس بات پر زور دیا ہے کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ممبروں نے جوہری معاہدے کے خلاف امریکہ کی تجویز کی مخالفت کی اور ٹرمپ اس معاہدے کے حوالے سے اپنی پالیسی میں تنہائی کا ایک بار پھر مظاہرہ کیا۔

یہ بات "حمید بعیدی نژاد" نے جمعرات کے روز اپنے ٹوئٹر پیج میں کہی۔
انہوں نے کہا کہ سلامتی کونسل نے ایک بار پھر اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف بین الاقوامی پابندیوں کو دوبارہ قائم کرنے کے امریکی تجویز کو مسترد کردیا۔ 2020 کے آخر میں ٹرمپ انتظامیہ کو ایک بار پھر شکست کا سامنا کرنا پڑا۔
بعیدی نژاد نے کہا کہ جوہری معاہدے کے تین یورپی ممبر ممالک ، یوروپی یونین کے ممالک ، چین، روس اور امریکہ کے مغربی اتحادیوں کے ساتھ ، غیرجانبدار تحریک نے امریکی تجاویز کے خلاف متفقہ طور پر ووٹ دیا۔
اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کی 5 ویں کمیٹی نے 2020 کے آخری دن ایران کے خلاف ٹرمپ کی تجویز کی مخالفت کی۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha