ارس فری زون؛ مشرق وسطی کی گرین ہاوس صنعت کی چمکتی ہوئی موٹی

تبریز، ارنا- ارس فری زون میں مشرق وسطی کا سب سے بڑا گرین ہاؤس کمپلیکس کے قیام کی وجہ سے وہ حالیہ برسوں میں مشرق وسطی کی گرین ہاؤس انڈسٹری کی چمکتی ہوئی موٹی بن گئی ہے۔

ارس فری ٹریڈ اینڈ انڈسٹریل زون میں دنیا کی جدید ترین ٹیکنالوجیوں کے ساتھ گرین ہاؤس کے سب سے بڑے یونٹوں میں اعلی معیار کی مختلف قسم مصنوعات کی پیداوارکیلئے مناسب فضا کی فراہمی کی گئی ہے؛ جس میں گھنٹی مرچ ، ٹماٹر اور کھیرے جیسی مصنوعات بڑے پیمانے پر پیداوار کی جاتی ہیں اور پابندیوں کے دوران، ان مصنوعات کی برامدات سے ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافے کیساتھ روزگار کے مواقع کی فراہمی بھی کی گئی ہے۔

ارس فری ٹریڈ اینڈ انڈسٹریل زون کے ڈائریکٹر مینجر نے ارنا نمائندے کیساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یہ گرین ہاوس بین الاقوامی معیاروں کے مطابق تعمیر کی گئی ہے اور یہ دنیا کے 10 بڑے گرین ہاوسز میں شامل ہے۔

محسن نریمان نے کہا کہ یہ مسئلہ خطے کے بہت سے معاشی اور زرعی کارکنوں کی توجہ اپنی طرف راغب کرے گا اور مجھے لگتا ہے کہ اس میں اگلے چند سالوں میں ارس فری زون میں ملک کی تمام زرعی مصنوعات بڑے پیمانے پر پیداور ہوں گی۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے ٹماٹر کی سب سے بڑی پیداوار کا ریکارڈ کیا ہے اور ارس فری زون گرین ہاوس کا سب سے بڑے مقصد برامدات ہے جو زیادہ تر اپنی مصنوعات کو پڑوسی ملکوں بالخصوص روس میں برآمدات کرتے ہیں۔

نریمان نے کہا کہ رواں سال کے دوران، ارس فری زون سے 240 ملین ڈالر کی مالیت پر مشتمل مختلف قسم کی مصنوعات کو آذربائیجان، ترکی، عراق، قازقستان، افغانستان، متحدہ عرب امارات، آرمینیا، چیک اور ازبکستان میں برآمد کیا گیا ہے۔

ارس فری زون میں سرگرم کسان "سعد اللہ اسکندری" نے بھی اس حوالے سے کہا کہ ہماری کامیابی کی کلید نئے علم اور ٹیکنالوجی کا استعمال اور جدید ترین معلومات ہے؛ غیر ملکی ماہرین اور داخلی تربیت یافتہ کارکنوں کے تجربات کو بروئے کار لانے سے ہمیں اپنے مقاصد حاصل کرنے میں مدد ملی ہے۔

انہوں نے کہا کہ یہ گرین ہاؤس کمپلیکس مشرق وسطی کا سب سے بڑا اور لمبا ہائیڈروونک گلاس گرین ہاؤس کمپلیکس ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 0 =