ایران کی سعودی اتحاد کیجانب سے اسٹاک ہوم معاہدے کے وعدوں پر پورا نہ اترنے کی تنقید

تہران، ارنا- ایرانی  وزیر خارجہ کے مشیر نے اسٹاک ہوم معاہدے کے تحت یمنی قومی نجات حکومت کی اپنی ذمہ داریوں اور اس کے یکطرفہ نفاذ کے عزم کا ذکر کرتے ہوئے سعودی اتحاد کیجانب سے اپنے وعدوں پر پورا نہ اترنے کی تنقید کی۔

انہوں نے اس امید کا اظہار کردیا کہ عالمی برادری کی کوششوں سے اس معاہدے کی بحالی ہوگی اور اس پر پوری طرح عمل درآمد کیا جائے گا۔

ان خیالات کا اظہار "علی اصغر خاجی" نے آج بروز بدھ کو سوئڈن کے نمائندے برائے یمنی امور "پٹر سمنی بی" سے ویڈیو کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر دونوں فریقین نے یمن کی تازہ ترین صورتحال سمیت یمن میں انسانوں کی تباہ من صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔

انہوں نے یمنی مسلئے کے سیاسی حل پر باہمی تعاون کے فروغ پر زور دیتے ہوئے کوورنا وبا کے دوران عالمی برادری کیجانب سے یمن میں انسانہ دوستانہ امداد کی ترسیل کی ضرورت پر زور دیا۔

خاجی نے اسٹاک ہوم معاہدے کے تحت یمنی قومی نجات حکومت کی اپنی ذمہ داریوں اور اس کے یکطرفہ نفاذ کے عزم کا ذکر کرتے ہوئے سعودی اتحاد کیجانب سے اپنے وعدوں پر پورا نہ اترنے کی تنقید کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کردیا کہ عالمی برادری کی کوششوں سے اس معاہدے کی بحالی ہوگی اور اس پر پوری طرح عمل درآمد کیا جائے گا۔

انہوں نے یمن میں قیام امن سے متعلق اقوام متحدہ کی کوششوں کی حمیا کرتے ہوئے یمن کیخلاف فوجی جارجیت کے جلد اختتام کی ضرورت پر زور دیا۔

در این اثنا سوئڈن کے نمائندے نے یمنی بحران کے سیاسی حل پر دونوں ملکوں کی کوششوں پر تبصرہ کرتے ہوئے اس بحران کے حل میں پوری صلاحیتوں کو بروئے کار لانے اور تعاون کے فروغ پر زور دیا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha