21 دسمبر، 2020 3:42 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 84156554
1 Persons
اعلی ایرانی دینی رہنما نے آسٹرین عدلیہ کا شکریہ ادا کیا

قم، ارنا- اعلی ایرانی دینی رہنما آیت اللہ صافی گلپایگانی نے ایک خط میں آسٹرین عدلیہ کو اس ملک کے پرائمری اسکولوں میں پردے پر پابندی کے قانون کی منسوخی پر شکریہ ادا کیا۔

تفصیلات کے مطابق آیت اللہ گلپایگانی نے آسٹرین عدلیہ کے سربراہ  ڈاکٹر "کرسٹوف گرابنوارٹر" کے نام میں ایک خط میں کہا گیا ہے کہ انسان کے فطری وقار جو خداوند متعال کا ہر رنگ، زبان، ثقافت اور جغرافیہ کے انسانوں کا عطیہ ہے، تسلط کے نظاموں کے ذریعہ ہمیشہ پامال ہوتا رہا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کسی بھی معاشرے کے پڑھے لکھے لوگ اور عدلیہ جن پر انسانی حقوق کے تحفظ اور انصاف کے انتظام کی ذمہ داری عائد ہوتی ہے، کا حکومتوں پر قابو پانے میں سب سے بڑا کردار ہے اور ان کو قوموں، ثقافتوں، مذہبی اصولوں اور رواج سے متعلق کسی بھی نا انصافی کو روکنے میں بہت بڑا کردار حاصل ہے۔

آیت الله گلپایگانی نے خط میں آسٹرین عدلیہ سے مسلمانوں کے حقوق کے تحفظ اور حجاب اور پردے سے متعلق ان کے قانونی حق کے حوالے سے ظالمانہ پابندی کو اٹھانے پر شکریہ ادا کیا۔

واضح رہے کہ آسٹرین عدلیہ کے سربراہ کرسٹوف گرابنوارٹر نے حالیہ دنوں میں کہا تھا کہ اس ملک میں پرائمری اسکولوں میں پردے پر پابندی کے قانون کو منسوخ کیا گیا ہے۔

قابل ذکر ہے کہ آسٹرین پارلیمان نے ملک بھر کے پرائمری اسکولوں میں ہیڈ اسکارف پہننے پر پابندی لگا دی تھی جو مسلمانوں پر واضح ظلم اور نا انصافی تھا۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 4 =