ایرانی صوبے مازندران سے آدھا ٹن کیویار کی یورپ اور ایشیا میں برآمدات

ساری، ارنا- ایرانی شمالی صوبے مازندران کی فشریز تنظیم کے ڈائریکٹر جنرل نے کہا ہے کہ رواں سال کے دوران، 500 کلوگرام فارمیڈ کیویار اور 70 ٹن سٹرجن گوشت کو اس صوبے سے یورپ اور ایشیایی ملکوں میں برآمد کیا گیا ہے۔

ان خیالات کا اظہار "حسن اسحاقی" نے بدھ کے روز ارنا نمائندے کیساتھ گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان ماہی گیری مصنوعات کی پہلی منزلیں جرمنی، برطانیہ، متحدہ عرب امارات اور روس کی ہیں۔

اسحاقی نے کہا کہ رواں سال کے دوران کیویار کی برآمدات میں گزشتہ سال کے پہلے 52 فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ رواں سال کے دوران، ملک میں 7 ہزار 823 ٹن ماہی گیری مصنوعات کی برآمدات ہوئی ہیں جن کی مالیت کی شرح 16 ملین 705 ڈالر ہے۔

صوبے مازندران کی فشریز تنظیم کے ڈائریکٹر جنرل نے کہا کہ اسی عرصے کے دوران ملک میں ماہی گیری مصنوعات کی برامدات میں 40 فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسی عرصے کے دوران، سب سے زیادہ تازہ مچھلی کو عراق، روس اور خلیج فارس ممالک میں برآمد کیا گیا ہے۔

اسحاقی نے کہا کہ رواں سال کے دوران صوبے مازندران میں ایکویٹک فیڈ اور ڈبہ بند مچھلی کی برآمدات میں قابل قدر اضافہ ریکارڈ کیا گیا اور ان میں گزشتہ سال کے مقابلے میں بالترتیب 86 فیصد اور 41 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
6 + 2 =