کوروناوائرس بھی یوریشیا کو ایرانی برآمدات میں نہیں روک سکتا ہے

تہران، ارنا - ایسی صورتحال میں جہاں اسلامی جمہوریہ ایران کو سخت مغربی پابندیوں کا نشانہ بنایا گیا ہے اور یورپ نے جوہری معاہدے کے تحت اپنی ذمہ داریوں کو پورا نہیں کیا ہے ، یوریشیا کے ساتھ کثیر الجہتی تعاون سے ایران کے لئے بہت سارے مواقع فراہم ہونے کے ساتھ ساتھ علاقائی تبادلے کی ترقی کا باعث اور غیر تیل برآمدات میں اضافہ ہو جائے گا.

یوریشین اکنامک یونین (EAEU) کے اقتصادی کمیشن نے اعلان کردیا کہ دنیا اور خطے میں کورونا کی وبا کے باوجود ایران کے ساتھ اس یونین کے تجارتی تبادلے کا حجم بڑھتا جارہا ہے۔

یوریشین کے اقتصادی کمیشن نے اطلاع دی ہے کہ 2020 کے پہلے آٹھ مہینوں میں ایران کے ساتھ اس یونین کی تجارت کی شرح 2٪ اضافے کے ساتھ 2 بلین ڈالر تک پہنچ ہوگئی ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 1 =