پاکستان کو تینوں ایرانی مغویوں کی رہائی کیلئے فوری اقدام اٹھانا ہوگا: ایرانی اسپیکر

تہران، ارنا – ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے کہا ہے کہ پاکستانی حکومت کو تینوں ایرانی مغویوں کی رہائی کیلئے فوری اقدام اٹھانا ہوگا۔

یہ بات محمد باقر قالیباف نے منگل کے روز ایران میں متعین پاکستانی سفیر رحیم حیات قریشی سے ملاقات کے دوران کہی۔

انہوں نے کہا کہ ہم توقع کرتے ہیں کہ پاکستانی حکومت تینوں ایرانی مغویوں کی رہائی کے لئے فوری کارروائی کرے۔

قالیباف نے ایران اور پاکستان کے مابین ثقافتی، مذہبی، سیاسی اور معاشی کے شعبوں میں دوطرفہ گہرے تعلقات کا حوالہ دیا۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں ہمیں دونوں ممالک کے مابین مختلف شعبوں خصوصا معاشی ، ثقافتی اور سرحدی کے شعبوں میں  تعاون کو مزید مستحکم کرنے کی جدوجہد کرنی ہوگی۔

ایرانی اسپیکر نے دونوں ممالک کی معاشی صلاحیت کو بروئے کار لانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے اسلامی جمہوریہ ایران اور پاکستان کی مشترکہ طاقتور سرحدوں کے باوجود سرحدی منڈیوں کے نفاذ سے دونوں ممالک کے سرحدی باشندوں کی سلامتی کو تقویت مل سکتی ہے۔

خطے میں امن و استحکام کے قیام کی اہمیت کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ کو مسلم ممالک کے ساتھ مذاکرات کی کوئی پیشگی شرائط نہیں ہے اور یقینا یہ کوئی ملک کے لئے خطرہ نہیں ہے۔

اس موقع پر رحیم حیات قریشی نے شہید فخری زادہ کی شہادت پر ایران کے عوام اور حکومت سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا کہ شہید فخری زادہ کا قتل تمام بین الاقوامی اصولوں کے خلاف تھا۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی حکومت اور عوام، پاکستانی حجاج کرام کا پرتپاک استقبال کرتی ہے  جس کے لئے ہم اسلامی جمہوریہ ایران کے عوام اور حکومت کے بے حد مشکور ہیں۔ اس کے علاوہ ہم پاکستانی حجاج کرام کے دورے  ایران کو آسان بنانے کی کوشش کرتے ہیں۔

ایران میں پاکستانی سفیر نے کہا کہ سرحدی منڈیوں کے دوبارہ کھولنا بھی اپنی حکومت کی ترجیح ہے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
6 + 0 =