نیوی کے تمام ساز و سامان ملکی ساختہ ہیں: ایرانی بحریہ کے سربراہ

تہران، ارنا- ایرانی بحریہ کے کمانڈر نے اس بات پر زور دیا کہ نیوی کے تمام ساز و سامان کو علم پر مبنی کمپینوں میں تیار کیا گیا ہے اور ہم اس شعبے میں خود کفیل ہوگئے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار ایڈمیرل "حسین خانزادی" نے منگل کے روز صنعتی اور تحقیقاتی شعبوں میں نیوی کی کامیابیوں سے متعلق منعقدہ ایک نمائش کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی مسلح افواج نے 1983 میں سپریم لیڈر کی ہدایت سے اسی عرصے میں اپنے کام کا آغاز کیا اور اب ہم نے دفاعی شعبوں میں قابل قدر ترقی کی ہے۔

خانزادی نے تمام شعبوں میں نیوی کی ترقی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ لیکن یہ ترقی 2009 میں بحریہ میں جماران ڈسٹرائر کی شمولیت سے اپنے عروج تک پہنچ گئی اور اس تقریب میں قائد اسلامی انقلاب بھی شریک تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایران کیخلاف لگائی پابندیوں کو موقع میں تبدیل کرنے سے نیوی کا مستقبل روشن ہے اور ہم اس حوالے سے مختلف تنظیموں کی حمایت کا شکرگزار ہیں۔

خانزادی نے کہا کہ بحریہ کی توجہ بحری سامان کی تعمیر پر ہے اور ہم نے برسوں پہلے سب میرینز اور ڈسٹرائر بنانے کے کام کا آغاز کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج، ہم نے ساز و سامانی کی ٹیکنالوجی کی صلاحیتوں کو بڑھایا ہے اور مقامی جہازوں کی ایک نئی نسل تیار کی جارہی ہے؛ میزائل، ٹارپیڈو، بارودی سرنگیں، گولہ بارود اور تمام بحری سامان ملک کے اندر ہی تیار کیے جاتے ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha