ایرانی سفیر کا برطانیہ سے شہید فخری زادہ کے قتل کی مذمت کا مطالبہ

لندن، ارنا- برطانیہ میں تعینات اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر نے لندن سے دفاعی اور جوہری شعبے میں اعلی ایرانی سائنسدان کے قتل کی مذمت کا مطالبہ کیا۔

"حمید بعیدی نژاد" نے ہفتے کے روز اپنے انسٹاگرام پیج میں جاری ایک پیغام میں کہا کہ شہید فخزی زادہ نے قوم کی سائنسی ترقی کی راہ میں اپنی جان کا نذرانہ دے دیا۔

انہوں نے فخزی زادہ کے قتل کو بین الاقوامی قوانین اور انسانی حقوق کے عالمی معیار و اقدار کی کھلی خلاف ورزی قرار دے دیا۔

بعیدی نژاد نے اس بات پر زور دیا کہ اسلامی جمہوریہ ایران شہید فخری زادہ کے خون کا بدلہ ضرور لے گا۔

انہوں نے کہا کہ حکومتوں اور بین الاقوامی تنظیموں سے توقع کی جاتی ہے کہ وہ واضح طور پر اس بزدلانہ قتل کی مذمت کریں۔

ایرانی سفیر نے کہا کہ اس سلسلے میں اسلامی جمہوریہ ایران برطانیہ سے مطالبہ کرتا ہے وہ عالمی سامراج اور صہیونیت کے اس غیر انسانی اقدام کی کھلی طور پر مذمت کرے۔

واضح رہے کہ ایران کے ایٹمی پروگرام کے بانی سائنسدان اور وزارت دفاع کی ریسرچ اورانوویشن تنظیم کے سربراہ محسن فخری زادہ کو 27 نومبر میں تہران میں ایک دہشتگردانہ حملے میں شہید کر دیا گیا۔

ایران کے دارالحکومت تہران کے علاقے دماوند میں مسلح افراد نے ایرانی سائنسدان کی گاڑی پر حملہ کیا؛ حملہ آوروں نے ان کی گاڑی کے قریب دھماکا اور فائرنگ کی جس کے نتیجے میں سائنس دان محسن فخری شدید زخمی ہوگئے، اُنہیں قریبی اسپتال منتقل کیا گیا تاہم وہ جانبر نہ ہوسکے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 1 =