امریکی صدراتی الیکشن ایک بہت بڑا اسکینڈل تھا: ایرانی عدلیہ کے سربراہ

تہران، ارنا- ایرانی عدلیہ کے سربراہ نے امریکہ کی ابتر معاشی اور معاشرتی صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکی حکام کو اپنے معاشرے کی ایک ڈیموکریٹک تصویر پیش کرنا تھا، تا ہم امریکی حالیہ صدراتی انتخابات ان کیلئے ایک بہت بڑا اسکینڈل تھا جس نے جمہوریت کا خول پھاڑ دے کر امریکہ کا اصل چہرہ بے نقاب کردیا۔

ان خیالات کا اظہار علامہ ابراہیم رئیسی نے آج بروز پیر کو منعقدہ ایک اجلاس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکیوں نے خود کو ایک ترقی یافتہ معاشرے کی حیثیت سے پیش کرنے کی کوشش کی؛ لیکن وہ ناکام رہے اور آج یہ بات ہم اور تمام اقوام پر واضح ہے کہ وہ دھمکی آمیز اور مسخ شدہ ہتھکنڈوں سے دنیا کے لوگوں کے معاشروں اور خیالات پر غلبہ حاصل کرنا چاہتے ہیں؛ لیکن ان کی دھمکیوں کا ہمارے روشن خیال معاشرے پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔

رئیسی نے مزید کہا امریکی مسکراہٹیں ہمارے لوگوں کے ذائقہ کو میٹھا نہیں کرتی ہیں اور ہمیں طاقت کیساتھ تسلط کے نظام پر قائم رہنا چاہیے۔

ایرانی عدلیہ کے سربراہ نے کہا کہ ہماری قوم کا قائد اسلامی انقلاب کی ہدایت سے امریکیوں کیلئے پیغام یہ ہے کہ وہ مزاحمت کیساتھ معاشی، سلامتی اور پیداواری کے شعبوں میں پوری طاقت سے کام کرتے ہوئے ایرانی وقار کو دنیا کے سامنے مظاہرہ کریں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایرانی قوم کا اصل پیغام قائد اسلامی انقلاب کے بیانات میں واضح ہے جنہوں نے بارہا کہا ہے کہ "مقصد تک پہنچنے کیلئے جد و جہد کرنے سے دشمن کو یاس کا شکار کرنا ہوگا۔"

ایرانی عدلیہ کے سربراہ نے اس بات پر زور دیا کہ ہمیں امریکیوں کو کمزوری کا پیغام نہیں بھیجنا چاہئے اور کمزوری کے پیغام کو ایران کی عظیم قوم کے پیغام سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
6 + 0 =