ایرانی اسلحے کی پابندی کا خاتمہ امریکی حکومت کیلئے ایک بڑا دھچکا ہے: قالیباف

تہران، ارنا – ایرانی اسپیکر نے کہا کہ ایران  پر اسلحے کی پابندی کا خاتمہ بے وقوف امریکی حکومت کے لیے ایک بہت بڑی شکست ہے۔

محمد باقر قالیباف نے آج بروز اتوار پارلیمنٹ کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کہی۔

انہوں نے کہا کہ ایران  پر اسلحے کی پابندی کا خاتمہ بے وقوف امریکی حکومت کے لیے ایک بہت بڑی شکست ہے۔ اور امریکی حکومت غیر قانونی اقدامات کے باوجود ایران کے خلاف اسنیپ بیک میکنزم کے نفاذ میں ناکام ہوئی اور یہ ایرانی قوم کے لئے ایک کامیابی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ ایرانی قوم کے لئے ایک کارنامہ ہے اور امریکی دباؤ کے جواب اور اسلحے کی خرید و فروخت کے کیلیے اہم اقدامات اٹھانا ضروری ہے۔

انہوں نے کہا کہ آنے والے دن ہمارے لیے بہت اہم ہے اور اس راستے سے گزرنے اور کامیابی کی شرط ایرانی قائد کی ہدایات پر عمل کرنا، عوام کی مشکلات کو حل کرنے کیلیے باہمی تعاون کرنا، دشمن کو مسلسل تعاقب کرنا، ٹھوس انداز میں لوگوں کے مسائل کو حل کرنا، ہے۔

ارنا کے مطابق ،جوہری معاہدے کے نفاذ کے پانچویں سال کے آخر میں ایران پر اسلحہ کی پابندی آج ، 18 اکتوبر کو ختم ہوگئی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 14 =