پچھلے 7 سالوں میں ایران میں علم پر مبنی کمپنیوں کی تعداد 100 گنی ہوگئی ہے: صدر روحانی

تہران،ارنا- ایرانی صدر ممکلت نے کہا ہے کہ گزشتہ 7 سالوں کے دوران ملک میں علم پر مبنی کمپنیوں نے بڑی ترقی کی ہے اور ان کی تعداد 100 گنی ہوگئی ہے جو انتہائی قابل قدر ہے۔

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر "حسن روحانی" نے جمعرات کے روز تین صوبوں بشمول مرکزی، تہران اور کرج میں زارعت، سائنس اور ٹیکنالوجی کے شعبوں میں نئے ترقیاتی منصوبوں کے افتتاح کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ طلباء اور یونیورسٹی کے فارغ التحصیل ان کمپنیوں کی طرف راغب ہوں گے اور یہاں تک کہ ایرانی تخلیقی افراد جو بیرون ملک میں ہیں وہ بھی علم پر مبنی کمپنیوں کی طرف راغب ہوتے ہیں اور یہ ہمارے لئے اہم ہے۔

صدر روحانی نے کہا کہ ادویات کی تیاری سے متعلق ایسی ادویات تیار کرنا بہت ضروری ہے جو بہت ساری بیماریوں سے بچنے کیلئے جسم کو تیار کرتی ہیں اور لوگ اس بیماری سے لڑ سکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آج کھلنے والی مینوفیکچرنگ کمپنیوں میں انسانی ادویات کی تیاری بھی ایجنڈے میں شامل ہے جن میں سے ایک گریوا کینسرکی ویکسن ہے جو بہت مہنگا ہے، اور ہم امید کرتے ہیں کہ ملکی ضروریات پوری کرنے کے بعد اسے بیرون ملک میں بھی برامد کرسکیں گے۔

صدر روحانی نے کہا کہ اگر آج ایک ارب ڈالر کی مالیت پر مشتمل ادویات کی خام مواد کی برآمدات ہو جاتی ہیں تو ہم اس کے 400 ملین ڈالر تو اندروں ملک میں تیار کرسکتے ہیں اورحکومت اس حوالے سے  علم پر مبنی کمپنیوں کی بھر پور حمایت کرے گی۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 9 =