ایرانی اسلحے کی پابندی 18 اکتوبر کو ختم کردی جائے گی: روسی وزیر خارجہ

ماسکو - ارنا - روسی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ایرانی اسلحے کی پابندی اپنی مقررہ تاریخ (اس سال 18 اکتوبر کو ) کے بعد ختم کردی جائے گی۔

روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے العربیہ ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے  جس کا متن روسی وزارت خارجہ کی ویب سائٹ پر شائع کیا گیا ہے، اس سوال کے جواب، کہ کیا  18 اکتوبر کو ایرانی اسلحےکی پابندی کی مدت کے خاتمے کے بعد کیا اسلحے کی دوڑ خلیج فارس کے خطے میں شروع ہوگی؟، کے ردعمل میں کہا کہ مقرر کردہ ڈیڈ لائن کی میعاد ختم ہونے کے بعد کوئی پابندی عائد نہیں ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے قرارداد 2231 میں اقوام متحدہ کے چارٹر  کے آرٹیکل 7 کے مطابق جس نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی تصدیق کرتا ہے دی ہے، کہا کہ ایران کو اسلحہ بھیجنے اور اس ملک سے اسلحہ بھیجنا سلامتی کونسل کا زیر مطالعہ موضوع ہے۔

لاوروف نے کہا کہ  18 اکتوبر 2020ایران میں اسلحے کے بھیجنے پر پابندی کا خاتمہ کیا جائے گا اور اسلحے پر کوئی پابندی نہیں ہے اور اس تاریخ کے بعد کوئی پابندی لاگو نہ ہوگی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 0 =